واسا کی کھڑی گاڑیاں اڑھائی کروڑ کا تیل پی گئیں، گھپلے کا کیس اینٹی کرپشن کوبھجوانے کی تیاریاں

واسا کی کھڑی گاڑیاں اڑھائی کروڑ کا تیل پی گئیں، گھپلے کا کیس اینٹی کرپشن ...
واسا کی کھڑی گاڑیاں اڑھائی کروڑ کا تیل پی گئیں، گھپلے کا کیس اینٹی کرپشن کوبھجوانے کی تیاریاں

  


لاہور (ویب ڈیسک) واسا افسران کا انوکھا کارنامہ، افسران نے کھڑی گاڑیاں پر بھی تیل کا خرچہ ظاہر کرڈالا، ایم ڈی واسا نے اڑھائی کروڑ مالیت کے ڈیزل خوردبرد کا معاملہ منظر عام پر آنے کے بعد انکوائری شروع کردی۔ نامزد افسران کے ملوث ہونے پر کیس اینٹی کرپشن کو بھوانے پر غور شروع کردیا گیا۔ مقامی اخبار سٹی 42 کے مطابق واسا سب ڈویژن داتا گنج بخش ٹاؤن میں اڑھائی کروڑ وپے مالیت کا ڈیزل خوربرد کرنے کے معاملے پر ایم ڈی واسا چودھری نصیر احمد نے انکوائری شروع کردی ہے۔ داتا گنج بخش ٹاؤن کے ڈائریکٹر مجیب رضا وارثی اور ایکسیئن سہیل سندھو پر ملوث ہونیکا الزام ہے جن کے خلاف ایم ڈی واسا نے ابتدائی انکوائری بھی مکمل کرلی ہے۔ اخبار کا کہنا ہے کہ واسا افسران کی ملی بھگت سے کھڑی گاڑیاں اور موٹرسائیکلوں کے نمبرز پر ڈیزل جاری ہوا جبکہ غیر متعلقہ ڈائریکٹوریٹ ذرینج کے ڈمپروں کی ہیرا پھیری کی گئی۔ واسا حکام ڈیزل خوردبرد کا معاملہ اینٹی کرپشن کو بھجوانے پر غور کررہے ہیں۔ خوردبرد کیا گیا ڈیزل ضلعی انتظامیہ کو پٹرول پمپ آؤٹ فال روڈ سے جاری کیا گیا ہے۔ ایم ڈی واسا چودھری نصری احمد کا کہنا ہے کہ تحقیقات جاری ہیں تاہم معاملات کی انکوائری مکمل ہونے تک کچھ کہنا قبل از وقت ہوگا۔

مزید : لاہور


loading...