فحاشی کیخلاف جنگ میں گوگل کا بڑا یو ٹرن

فحاشی کیخلاف جنگ میں گوگل کا بڑا یو ٹرن
فحاشی کیخلاف جنگ میں گوگل کا بڑا یو ٹرن

  


سان فرانسسکو (نیوز ڈیسک) گوگل کی طرف سے حال ہی میں یہ خوشخبری سنائی گئی تھی کہ اس کے بلاگ پلیٹ فارم پر فحش ویڈیوز اور تصاویر بھیجنے کی اجازت نہیں دی جائے گی اور اس قسم کا مواد بھیجنے والوں کے اکاﺅنٹس پر پابندیاں لگائی جائیں گی مگر شیطانی طاقتوں کے دباﺅ میں آکر گوگل نے اپنے اس عزم سے راہ فرار اختیار کرلی ہے اور حیاءسوز مواد بھیجنے کی کھلی اجازت دے دی ہے۔

سال کا وہ دن جس پرروس میں جوڑوں کو بچے پیدا کرنے کے لیے کام سے چھٹی دے دی جاتی ہے

بے حیائی کے خاتمے کی مہم چلانے والے افراد اور اداروں نے اس بات پر خوشی کا اظہار کیا تھا کہ گوگل نے فحش مواد کے خلاف ایکشن کا اعلان کیا تھا اور شرمناک مواد کو ایک مہینے کے اندر اندر ڈیلیٹ کرنے کو کہا تھا مگر اب ان سب لوگوں کی امیدوں پر پانی پھر گیا ہے۔ قابل اعتراض مواد بھیجنے والے بلاگرز نے گوگل کے اعلان کو اپنے حقوق کے لئے خطرہ قرار دیا تھا اور ان کا موقف تھا کہ فحش مواد بھیجنا ان کا بنیادی حق ہے کیونکہ وہ اسے اظہار کا طریقہ سمجھتے ہیں۔ افسوسناک بات یہ ہے کہ گوگل نے اس شرمناک منطق کے ساتھ اتفاق کرلیا ہے اور اب صرف یہ شرط رکھی ہے کہ حیاءسوز مواد دکھانے سے پہلے محض یہ بتادیا جائے کہ کیا دکھانے والا ہے اور اس کے بعد جو چاہے دکھا دیا جائے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...