انڈسٹریل زونزکی ترقی حکومت کی اولین ترجیح،حمایت اللہ خان

انڈسٹریل زونزکی ترقی حکومت کی اولین ترجیح،حمایت اللہ خان

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)خیبرپختونخواحکومت نئے ضم شدہ قبائلی اضلاع میں صنعتی ترقی اوربجلی کے نظام کی بہتری کے لئے انقلابی اقدامات اٹھارہی ہے جس سے نہ صرف صنعتی شعبہ ترقی کرے گابلکہ لاکھوں افراد کے لئے روزگارکے مواقع میسرآئیں گے۔تجارت کے فروغ کے لئے قبائلی اضلاع میں انڈسٹریل زونزکی ترقی حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔قبائلی اضلاع میں صنعتی شعبے کی ترقی کیلئے بجلی کی فراہمی کے لئے 6نئے گرڈسٹیشنزکی تعمیر پر کام تیزی سے جاری ہے جوکہ آئندہ سال تک مکمل کرلئے جائیں گے۔رواں سال صوبائی حکومت اپنی ٹرانسمیشن اینڈ ڈسٹری بیوشن کمپنی بنالے گی اورصنعتی شعبے کو ارزاں نرخوں پر ویلنگ ماڈل کے ذریعے بجلی فروخت کرنے کے منصوبے کو وسعت دی جائے گی۔ ان خیالات کا اظہاروزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا کے مشیربرائے توانائی وبرقیات حمایت اللہ خان اور معاون خصوصی برائے صنعت وتجارت عبدالکریم خان کی زیرصدارت نئے ضم شدہ قبائلی اضلاع میں صنعتی ترقی اوربجلی کے نظام کی بہتری کے لئے جاری منصوبوں کے حوالے سے جائزہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں معاون خصوصی برائے ایکسائزغزن جمال،سنیٹرتاج محمد آفریدی،قبائلی اضلاع سے منتخب اراکین اسمبلی،سیکرٹری توانائی محمد زبیرخان،ٹیسکوحکام،سی ای اوآئل اینڈگیس کمپنی عثمان خٹک،سی ای اوپیڈوانجینئرنعیم خان سمیت اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔ اجلاس میں چیف انجینئرٹیسکونے بتایاکہ ضم شدہ قبائلی اضلا ع میں بجلی کے نظام کی بہتری کے لئے6نئے گرڈ سٹیشنز تعمیر کئے جارہے ہیں جن میں 2ضلع کرم،2ضلع اورکزئی،ایف آرٹانک کے علاقہ جندولہ اورنارتھ مہمندشامل ہیں جبکہ ٹل سے پاڑہ چنارتک اورغلنئی میں الگ ٹرانسمیشن لائنیں بچھائی جارہی ہیں۔ملاگوری،مہمندماربل سٹی اور انڈسٹریل زونزسمیت گھریلوں صارفین کو بجلی کی ترسیل کے نظام کی بہتری کے لئے گرڈسٹیشنزکی اپ گریڈیشن پر بھی کام تیزی سے جاری ہے۔ انہوں نے بتایا کہ بجلی کے نظام کی بہتری سے ان اضلاع میں صنعتی شعبہ وتجارت کو فروغ حاصل ہوگاجس سے تقریباً1لاکھ افرادکوروزگارکے نئے مواقع میسرآئیں گے۔اجلاس میں قبائلی ضلع سے منتخب سنیٹرتاج محمد آفریدی نے قبائلی اضلاع میں صنعتی شعبے کی ترقی اوربجلی کے نظام کی بہتری کے لئے بعض تجاویز بھی دیں۔اجلاس میں سیکرٹری توانائی محمد زبیر خان نے قبائلی اضلا ع میں تیل وگیس کی تلاش کے لئے بھی بعض تجاویزپر اتفاق کیا اورزوردیا کہ قبائلی اضلاع کی ترقی حکومتی ترجیحات میں سرفہرست ہے اس لئے افسران یہاں جاری منصوبوں کو پہلی ترجیح میں مکمل کریں۔اجلاس میں مشیر توانائی حمایت اللہ خان،معاون خصوصی برائے تجارت وصنعت عبدالکریم اورمشیر ایکسائزوٹیکسیشن غزن جمال نے قبائلی علاقوں کی ترقی کے لئے مشترکہ طورپر اقدامات اٹھانے پر اتفاق کیااورعزم دہرایا کہ قبائلی اضلاع کی محرومیوں کا ازالہ کرنے کے لئے ہرفورم پر آوازاٹھائیں گے

مزید : پشاورصفحہ آخر