کرونا وائرس پھیلنے کا خدشہ، سعودی عرب نے عمرہ ویزے منسوخ کر دیئے، مسجد نبوی ؐ کی زیارت بھی بند، کراچی، لاہور، اسلام آباد اور سیالکوٹ میں عمرہ زائرین جہازوں سے آف لوڈ

کرونا وائرس پھیلنے کا خدشہ، سعودی عرب نے عمرہ ویزے منسوخ کر دیئے، مسجد نبوی ...

  



ریاض، اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، ڈویلپمنٹ سیل،مانیٹرنگ ڈیسک،نیوز ایجنسیاں) سعودی عرب نے کورونا وائرس کے پھیلاو کے خدشے کے باعث عمرے یا مسجد نبوی کی زیارت کے لیے آنے والے غیر ملکی افراد کا ملک میں داخلہ عارضی طور پر معطل کرنے کا اعلان کیا ہے اور مسجد نبوی کی زیارت پر بھی پابندی عائد کر دی ہے۔سعودی نشریاتی ادارے کے مطابق سعودی وزارت خارجہ کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ سیاحتی ویزے اور عمرہ ویزے پر پاکستان سمیت دنیا بھر سے آنے والے افراد کا سعودی عرب میں داخلہ معطل کردیا گیا ہے۔ سعودی عرب میں کورونا وائرس کے خطرے کو روکنے کے لیے رہنما اصولوں کے تحت خلیج تعاون کونسل کے رکن ممالک کے شہریوں کی قومی شناختی کارڈ کے ذریعے یہاں آمد و رفت کو بھی معطل کیا جا رہا ہے۔ قبل ازیں سعودی عرب کے محکمہ پاسپورٹ نے ہوائی اڈوں، بندرگاہوں اور بری سرحدی چوکیوں سے مملکت آنے والے تمام مسافروں کو نیا ہدایات نامہ جاری کیا تھا۔سعودی عرب کے اس فیصلے کے بعدپاکستان سے عمرہ زائرین کی پروازیں منسوخ کر دی گئی ہیں۔جس کے باعث ملتان اور لاہور سے زائرین کی تمام پروازیں منسوخ کر دی گئیں، عمرہ زائرین کی فلائٹس ری شیڈول کرنے سے پہلے اجازت لینا ہوگی، قومی ایئر لائن اور نجی ایئر لائنز انتظامیہ کو فیصلے سے آگاہ کر دیا گیا۔ ادھر اسلام آباد ایئرپورٹ پر غیر ملکی فضائی کمپنی نے 90 عمرہ زائرین کو پرواز سے اتاردیا(آف لوڈ کردیا)ہے۔ یہ عمرہ زائرین غیر ملکی پرواز ای وائی 232 سے سعودی عرب جا رہے تھے۔ذرائع کے مطابق وزٹ ویزہ والے مسافر بھی سعودی عرب نہیں جا سکیں گے اور صرف بزنس ویزہ یا اقامہ رکھنے والے ہی جاسکیں گے۔ایوی ایشن ڈویژن نے پی آئی اے اور دیگر ایئر لائنز کو ہدایات جاری کردی ہیں جس کا باضابطہ نوٹیفکیشن جاری کردیا گیاہے،علامہ اقبال انٹرنیشنل ایئرپورٹ لاہورسے سعودی عرب جانے والی پروازوں سے بھی عمرہ زائرین کو آف لوڈ کردیا گیا،عمرہ زائرین نے احتجاج کرتے ہوئے عملے سیتکرار بھی کی۔ پی آئی اے کی مدینہ جانے والی پرواز پی کے 747 سے 300عمرہ زائرین کو آف لوڈ کر دیا گیا جبکہ سعودی ائیر کی جدہ جانے والی پرواز ایس وی 735 سے بھی اتنی ہی تعداد میں عمرہ زائرین کو آف لوڈ کر دیا گیا۔ عمرہ زائرین اور انکے عزیز و اقارب نے پروازوں کی روانگی نہ ہونے پر شدید احتجاج کیا ۔ پی آئی اے کی عمرہ زائرین کو لے جانے والی دوسری پرواز پی کے 759 کو بھی روک دیا گیا جبکہ اس کے مسافروں کو گھروں سے نہ آنے کے پیغامات دئیے جارہے ہیں۔سمبڑیال سے نامہ نگا کے مطابق سیالکوٹ انٹرنیشنل ائرپورٹ پر بھی عمرہ زائرین کو جہاز سے اتار دیا گیاکرونا وائرس، ایران کے ساتھ تمام ڈائریکٹ پروازوں پر دوروز کیلئے پابندی عائد کر دی گئی کررونا وائرس کے پھیلاؤ کے پیش نظر پاکستان نے ایران کے ساتھ تمام ڈائریکٹ پروازوں پر دوروز کیلئے پابندی عائد کر دی گئی۔وزارت ہوا بازی کے فیصلے کے مطابق ایران کے ساتھ تمام ڈائریکٹ پروازوں پر 27 اور 28 فروری کی درمیانی رات 12 بجے تا حکم ثانی پابندی عائد کر دی گئی ہے.

سعودی عرب

اسلام آباد، لاہور (سٹافرپورٹر، جنرل رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک) وزارت قومی صحت نے کرونا وائرس کے خطرات اور اس سے بچاؤ کیلئے الرٹ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ عوام غیر مصدقہ خبروں اور افواہوں پر دھیان نہ دیں۔ صورتحال واضح کرنے کیلئے روزانہ حقائق سے آگاہ کیا جائے گا۔وزارت قومی صحت کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ عوام گھبرائیں نہیں، کرونا وائرس سے بچاؤ کے تمام انتظام کر رکھے ہیں۔ وفاقی حکومت نے صوبائی حکومتوں کے تعاون سے ہر سطح پر ضروری انتظامات کیے ہیں۔ عوام بھی احتیاطی تدابیر اختیار کریں۔کورونا وائرس سے بچاؤ کیلئے محکمہ صحت پنجاب نے الرٹ جاری کر دیا ہے، پنجاب کے پانچ بڑے ہسپتال کررونا کے حوالے سے فوکل ہسپتال قرار دئیے گئے ہیں۔ سروسز ہسپتال لاہور، الائیڈ ہسپتال فیصل آباد، علامہ اقبال میموریل ہسپتال سیالکوٹ، نشتر ہسپتال ملتان اور راولپنڈی میڈیکل یونیورسٹی ہسپتال شامل ہیں۔مشتبہ مریضوں کے علاج معالجہ کیلئے ڈاکٹرز اور نرسز کی ٹریننگ مکمل ہو گئی ہے۔ ڈی جی ہیلتھ کے دفتر میں مانیٹرنگ سیل 24 گھنٹے فعال کر دیا گیا ہے۔ اس سلسلے میں سیکرٹری صحت کیپٹن ریٹائرڈ محمد عثمان کہتے ہیں بائیو سیفٹی لیب لاہور میں کورونا کے ٹیسٹ ہوں گے۔ تیز بخار میں مبتلا شخص کورونا وائرس کا شکار ہو سکتا ہے۔ سیکرٹری صحت کا مزید کہنا تھا سرجیکل ماسک وائرس کو روکنے کیلئے ناکافی ہیں۔ادھر پاکستان میں کرونا وائرس کی انٹری کے بعد لاہور ائیرپورٹ پر اندرون اور بیرون ملک سے آنے والے مسافروں کی سکریننگ مزید سخت کر دی گئی ہے۔لاہور ائیرپورٹ پر پاک فوج، ایف آئی اے اور محکمہ صحت کی ٹیمیں موجود ہیں اور مسافروں کی سکریننگ کے لیے ایک کاؤنٹر قائم کر دیا گیا ہے۔ چین اور ایران کے لیے فلائٹ آپریشن تاحال بند ہے۔ایف آئی اے ذرائع کے مطابق بیرون ملک سے آنے والے مسافروں کی مکمل سکریننگ کی جا رہی ہے۔ کراچی سے فلائٹ آپریشن شیڈول کے مطابق جاری رہے گا۔ تاہم کراچی سے آنے والوں کو بھی اسی عمل سے گزرنا پڑے گا۔دوسری جانب کرونا وائرس کے خدشہ کے پیش نظر محکمہ ریلیف خیبر پختونخوا نے ماتحت دفاتر کے ملازمیں کو احتیاطی تدابیر اپنانے کی ہدایت کر دی ہے جبکہ بائیو میٹرک مشین سے ملازمین کی حاضری وقتی طور پر روک دی گئی ہے۔محکمہ ریلیف کی جانب سے ریسکیو 1122، پی ڈی ایم اے، سول ڈیفنس اور پیرا ایبٹ آباد کو مراسلہ ارسال کر دیا گیا۔ مراسلے میں کہا گیا ہے کہ دفاتر میں روایتی طریقے سے گلے ملنے اور ہاتھ نہ ملانے سے متعلق ملازمین کو شائستگی سے سمجھایا جائے۔ دفاتر میں بائیو میٹرک حاضری کو بھی وقتی طور پر روکا جائے۔مراسلہ کے مطابق سائیڈ ریلنگ، دروازوں پردستک وغیرہ سے گریز کیا جائے۔ تمام دفتری اشیا، کمپیوٹر کیبورڈ، ٹیلی فون اور فیکس مشین وغیرہ کو چھونے کے لئے مناسب اور عارضی دستانوں کا بندوبست کیا جائے۔کسی بھی ملازم کو زکام کی تکلیف کی صورت میں ماسک لازمی استعمال کیا جائے۔ ماسک کو ایک دن سے زیادہ استعمال سے گریز کیا جائے۔ تمام باتھ روم سے تولیے ہٹانے اور صاف ستھرے تولیے رکھنے کی ہدایت کی گئی ہے۔ کسی بھی ملازم کو کھانسی زکام کی صورت میں فوری ہسپتال سے رجوع کرنے کی ہدایات بھی دی گئیں ہیں۔ترجمان دفتر خارجہ عائشہ فاروقی کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس سے نمٹنے کیلئے وفاقی وزارت صحت اور صوبے تیار ہیں۔ ایران میں پاکستانیوں کے تحفظ کیلئے اقدامات جاری ہیں۔ فلائٹ آپریشن کی معطلی پر سعودی حکام سے بھی رابطے ہیں جبکہ چین کیساتھ تجارت متاثر نہیں ہوگی۔صوبہ سندھ کی صورتحال کی بات کی جائے تو کراچی میں وزیراعلیٰ مراد علی شاہ کے زیر صدارت کرونا وائرس سے متعلق ہنگامی اجلاس ہوا جس میں چیف سیکریٹری، وزیر صحت سندھ، وزیر بلدیات، مرتضیٰ وہاب، ڈی جی رینجرز سمیت دیگر متعلقہ افسران نے شرکت کی۔ وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ کرونا وائرس کے 2 کیس سامنے آنے پر پریشانی ہوئی ہے۔اجلاس میں سیکریٹری صحت نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ کل دو کیسز آنے کے بعد ان کے اہلخانہ کو چیک کیا گیا، 6 گھنٹوں میں ٹیسٹ کے بعد وائرس کا پتا چل جاتا ہے۔بریفنگ میں مزید بتایا گیا کہ اوجھا کیمپس، سول ہسپتال، لیاری ہسپتال، میرپورخاص سول ہسپتال، سکھر، نواب شاہ اور دیگر اضلاع میں آئسولیٹڈ وارڈ بنائے گئے ہیں جبکہ وزیراعلیٰ کی ہدایت پر محکمہ صحت میں ایمرجنسی سیل قائم کر دیا گیا ہے۔سیکرٹری صحت نے بتایا کہ جن 28 لوگوں نے کرونا وائرس کے مریضوں کے ساتھ سفر کیا ہے ان کے ساتھ رابطہ ہوگیا ہے، یہ تمام افراد خود بھی محکمہ صحت سے رابطہ میں ہیں اور تعاون کر رہے ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ نے ایران سے آنے والے 1500 افراد کی سکرننگ کی ہدایت کی۔ مراد علی شاہ نے کہا کہ جو اشیاء ہسپتالوں کیلیے چاہیں اس کی فوری خریداری کی جائے اور عوام میں آگاہی مہم بھی چلائی جائے۔دوسری طرف وزارت صحت نے ایرانی ائیرلائن سے کراچی آنے والے 232 مسافروں کو کلیئر قرار دے دیا۔ذرائع کے مطابق تہران سے کراچی پہنچنے والی ایران ائیر کی پرواز کو بریج پر لگنے سے روک دیا گیا تھا اور طیارے کو محفوظ مقام پر پارک کرکے اسکریننگ کا عمل مکمل کیا گیا۔ذرائع نے بتایاکہ محکمہ صحت کی ٹیموں نے رن وے پر ہی مسافروں کی اسکریننگ مکمل کی اور ہیلتھ ڈیکلیریشن کے ساتھ مسافروں کا سفری ڈیٹا بھی طلب کیا گیا۔محکمہ صحت کے حکام نے مسافروں کی اسکریننگ مکمل کرکے طیارے میں سوار تمام 232 مسافروں کو کلیئر قرار دے دیا۔جبکہ پمزہسپتال میں کورونا کی مشتبہ 5 خواتین منتقل کر دی گئیں۔میڈیا رپورٹ کے مطابق پانچوں خواتین کا تعلق گلگت ہنزا سے ہے،خواتین دو دن پہلے ایران زیارات کے بعد پاکستان پہنچی ہیں،پانچوں خواتین کو شک کی بنیاد پر پمز لایا گیا،عورتوں کا تعلق کریم آباد ہنزا سے ہے۔ کرونا وائرس کی مشتبہ خواتین کے نام نرگس، بیگم، عابدہ، بی بی راحیل اور مریم ہیں۔ایگزیکٹو ڈائریکٹر قومی ادارہ صحت (این آئی ایچ) میجر جنرل ڈاکٹر عامر اکرام نے کہا ہے کورونا وائرس سے اموات کی شرح دو فیصد سے بھی کم ہے۔صحافیوں سے گفتگو میں میجر جنرل ڈاکٹر عامر اکرام نے کہا کہ اس قسم کی وبائی صورت حال میں ہمیں خوف کو کنٹرول کرنا ہوتا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں کورونا وائرس سے دو افراد کے متاثر ہونے کی تصدیق ہوئی ہے لیکن دونوں متاثرہ افراد صحتیاب ہو رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ اسلام آباد میں زیر علاج متاثرہ شخص کے اہلخانہ کے ٹیسٹ کر لیے ہیں جو منفی آئے ہیں۔

عمرہ زائرین آف لوڈ

بیجنگ(شِنہوامانیٹرنگ ڈیسک)چین کے محکمہ صحت نے جمعرات کے روز کہا ہے کہ چینی مین لینڈ کے صوبائی سطح کے 31علاقوں سے بدھ کے روز نوول کرونا وائرس کے 433 نئے مصدقہ کیسز اور 29اموات کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔قومی صحت کمیشن کے مطابق مرنے والوں میں سے 26 کا تعلق صوبہ ہوبے سے جبکہ ایک ایک کا تعلق بالترتیب بیجنگ،حئی لونگ جیانگ اور ہینان سے تھا۔ وائرس سے بری طرح متاثرہ صوبہ ہو بے میں کل مصدقہ مریضوں کی تعداد 65ہزار 596 تک بڑھ گئی ہیں،جبکہ اس مرض سے مرنے والوں کی تعداد 2744 ہوگئی ہے۔چین کے ریاستی کونسلر اور وزیر خارجہ وانگ اِی نے کہاہے کہ چین اور جاپان کو سرحدوں کے آر پار کووڈ19 کی وبا ء کے پھیلا ؤکی روک تھام اور دونوں ممالک اور خطے میں عوامی صحت کی حفاظت کیلئے تعاون بڑھانے کی ضرورت ہے۔جاپان کے وزیرخارجہ توشی مِتسو موتیگی سے ٹیلی فون پرگفتگو کرتے ہوئے وانگ نے تجویز دی کہ چین او رجاپان صنعتی اور فراہمی کے بہا اور کووڈ19 کے دو طرفہ تعاون پر اثرات ممکنہ حد تک کم کرنے کیلئے مشترکہ یقین دہا نی کروا تے ہیں۔وانگ نے کہا کہ انہیں یقین ہے کہ جاپان نوول کرونا وائرس کی وبا ء پر موثر قابو پانے کی اہلیت اور حالات رکھتا ہے۔ میری خواہش ہے کہ یہ ٹوکیو اولمپکس کی شیڈول کے مطابق کامیاب میزبانی کرے۔وانگ نے دونوں ممالک پر بھی زور دیا کہ وہ کثیرالجہتی فریم ورک کے اندر عوامی صحت سے متعلق بین الاقوامی تعاون کو مستحکم کرنے کے لئے فعال طور پر طریقے تلاش کریں۔وانگ نے کہا کہ مجھے یقین ہے کہ چین اور جاپان کے درمیان معمول کے اقتصادی اور تجارتی تعاون کو برقرار رکھنا دنیا کے معاشی استحکام اور ترقی کیلئے ایک اہم شراکت ہے۔برازیل کے محکمہ صحت نے ملک میں پہلے کرونا وائرس کے مریض کی تصدیق کردی۔برازیل کے وزیرصحت لوئز مینڈیٹا نے ایک پریس کانفرنس کو بتایا کہ ایک 61 سالہ شخص کے کووڈ۔19 کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں جو کہ لا طینی امریکہ کا پہلا مصدقہ کیس بن گیا۔یہ مریض گزشتہ ہفتے فرانس اور اٹلی کے سفر کے بعد سا ؤپولو پہنچا تھا جہاں کرونا وائرس کے سینکڑوں کیسز اور کئی اموات کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں ۔عراق میں نوول کرونا وائرس کے پھیلا کے خدشہ کے پیش نظر تمام اسکولوں اور یونیورسٹیوں کو 7 مارچ تک بند کردیا گیا ہے۔کرغستان کے مقامی میڈیا کا کہنا ہے کہ ایران، جمہوریہ کوریا، اٹلی اور جاپان کا سفر کرنے والے افراد کو قرنطینہ میں رکھا جائے گا۔

چین ہلاکتیں

مزید : صفحہ اول