بھارت میں مودی سرکار انسانیت کی تذلیل کر رہی ہے،بیلم حسنین

  بھارت میں مودی سرکار انسانیت کی تذلیل کر رہی ہے،بیلم حسنین

  



لاہور(نمائندہ خصوصی) پیپلزپارٹی کی سابق رکن قومی اسمبلی بیگم بیلم حسنین نے کہا ہے کہ بھارت میں مودی سرکار انسانیت کی تذلیل کر رہی ہے، مسلمانوں کے گھر جلانے، مسجدوں کی بے حرمتی کرنے کی پیپلزپارٹی شدید مذمت کرتی ہے۔ گزشتہ روز ایک بیان میں بیگم بیلم حسنین نے کہا کہ ہم اقوام متحدہ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ بھارت میں مسلمانوں کے ساتھ ہونے والا ظلم روکا جائے۔ انتہا پسند ہندؤ مودی کے کہنے پر نفرت پھیلا رہے ہیں۔ مودی نے مسلمانوں سے نفرت کا آغاز کشمیر سے کیا اور اب بھارت کے مسلمانوں کے ساتھ ظلم کی انتہا کردی۔ اس وقت 20 کروڑ مسلمان مودی کے ظلم شکار ہیں اور دنیا خاموش ہے۔ سابق رکن قومی اسمبلی مہناز رفیع نے کہا کہ بھارت اپنے سیکولر ہونے پر فخر کرتا تھا، آج دنیا نے دیکھ لیا کہ وہ مذہبی انتہا پسند ملک ہے جو اقلیتوں کا خیال نہیں کر رہا ہے اور عبادت گاہوں کی بے حرمتی کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ افسوس کی بات یہ ہے کہ مسلمان ممالک خاموش ہے کیونکہ وہ بھارت سے تجارت کرتے ہیں۔ مہناز رفیع نے کہا کہ او آئی سی بھی خاموش ہے۔ مودی نے ظلم کا کوئی جواب نہیں رہا، تحریک انصاف کی رکن پنجاب اسمبلی شمسہ علی نے کہا کہ مودی نے کشمیر سے ظلم کا آغاز کیا اور اب بھارت کی گلی گلی کوچہ کوچہ مسلمانوں کے خون سے سرخ ہے۔ انہوں نے کہا کہ او آئی سی اور اقوام متحدہ کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیے۔ وزیراعظم عمران خان کشمیر کے علاوہ بھارتی مسلمانوں کی حمایت میں بھرپور کردار ادا کر رہے ہیں۔ شمسہ علی نے عالمی برادری سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ بھارت کے ظلم کا نوٹس لے۔

بیلم حسنین

مزید : میٹروپولیٹن 1