احتساب عدالتوں سے رواں سال 14ملزم بری، 3کو سزاسنائی گئی

احتساب عدالتوں سے رواں سال 14ملزم بری، 3کو سزاسنائی گئی

  



لاہور(کامران مغل)احتساب عدالتوں سے پاکستان پیپلزپارٹی کے راہنمااورسابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف سمیت 14ملزموں کو بری کردیاگیا جبکہ خاتون سمیت 3مجرموں کو کرپشن ثابت ہونے پرسزائیں سنا ئی گئی ہیں جبکہ سیاستدانوں سمیت دیگر کے اہم شخصیات کے کرپشن کے متعدد مقدمات تاحال احتساب عدالتوں میں زیرہیں۔تفصیلات کے مطابق احتساب عدالتوں میں کرپشن کے کیسز میں ملوث سابق وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف، ان کے صاحبزادے پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز، ایڈن ہاؤسنگ سوسائٹی فراڈ کیس میں ملوث سابق چیف جسٹس پاکستان افتخار چودھری کے داماد ڈاکٹر محمد امجد،سابق پرنسپل سیکرٹری فواد حسن فواد، مسلم لیگ (ن) کے راہنما مسلم لیگ (ن) کے راہنماؤں خواجہ برادران پیراگون ہاؤسنگ سکینڈل کیس اورسابق ایم پی اے حافظ نعمان سمیت صاف پانی کیس میں قمر السلام،وسیم اجمل،ڈی پی او گجرات 70کروڑروپے کرپشن سکینڈل کیس، ڈی پی او آفس ساہیوال 360 ملین کرپشن سکینڈل،جعلی بینک کے ذریعے شہریوں سے 52 ملین فراڈ سکینڈل،55 کروڑ روپے کے ریلوے،ڈی سی آفس میں جعلی 47ہزار سے زائداسلحہ لائسنس سکینڈل سمیت دیگرکرپشن کے مقدمات زیرسماعت ہیں جن کا ٹرائل جاری ہے اور ان کی سماعت باقاعدگی سے جاری ہے، جن مقدمات میں احتساب عدالتوں نے سزائیں سنا ئی ہیں ا ن میں احتساب عدالت کے جج اسدعلی نے کمپیوٹرز ایسیسریز کی مد میں لوگوں سے فراڈ کیس میں ملوث مجرم عثمان ممتاز کو 5 سال قید اور 9 کروڑ 78 لاکھ روپے جرمانے کی سزا کاحکم سنا دیاہے جبکہ مقدمہ میں شریک2ملزموں ذیشان اور رضوان کو بری کردیا،ان پرکمپیوٹر کی خریدوفروخت کی مد میں کروڑوں روپے کا فراڈ کاالزام تھا،ملزمان پر نیب کی جانب سے 2015 ء میں ریفرنس دائر کیا گیا تھا،اسی طرح احتساب عدالت نمبر5کے جج امجد نزیر چودھری نے سوزوکی موٹرز فراڈ کے مقدمہ کا فیصلہ سنا تے ہوئے سیالکوٹ کی خاتون مجرمہ صائمہ سلطان کو15دن کی قید اور 37 کروڑ روپے جرمانہ کی سزاکاحکم سنایا ہے جبکہ احتساب عدالت کے جج اسد علی نے مشال سرجیکل ڈی ایچ میں سادہ لوح افراد کو منافع دینے کی اڑ میں لوٹنے والے ملزم محمد امجد پرویز کے اقبال جرم کرنے پر اسے 6سا ل قید اور 14کروڑ روپے جرمانے کی سزا کاحکم سنادیاہے،عدالت نے اس کیس میں شریک ملزم فیاض کو بری کر نے کاحکم دیاہے۔ ملزموں کے خلاف نیب نے 2016ء میں ریفرنس دائرکیا تھا،ملزمان پر600افراد کو کمپنی سے منافع دینے کی آڑمیں لوٹنے کا الزام تھا،احتساب عدالتوں کی جانب سے جن ملزموں کو بری کیا گیاہے ان میں احتساب عدالت کے جج امجد نذیرچودھری نے پاکستان پیپلز پارٹی کے راہنماسابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف، سابق ایم ڈی پیپکو طاہربشارت چیمہ،سابق سیکرٹری وزارت پانی و بجلی شاہد رفیع، سابق ڈائریکٹرز بورڈ آف گورنرز محمد سلیم عارف، ملک محمد رضی عباس، وزیرعلی بھائیو،سابق سی ای اومحمد ابراہیم مجوکہ اور سابق ڈائریکٹر ایچ آرحشمت کو بری کردیاہے،ملزموں پرپیپکواور گیپکومیں غیر قانونی بھرتیوں کا الزام تھا،اسی طرح احتساب عدالت کے جج امجد نذیر نے اختیارات کا ناجائز استعمال کرنے کے ریفرنس میں ایس ای لیسکو عزیزالرحمن،ایکسیئنز احمد شہزاد،شفقت محمود اور نعیم احمد کو بری کر دیاہے،،نیب کی جانب سے ایس ای اور تین ایکسیئن کے خلاف اختیارات کا ناجائز استعمال کرنے کے الزام میں ریفرنس دائر کیا گیاتھا۔

مزید : صفحہ آخر