سعودی عرب نے ایک ہی دن میں 7 افراد کے سر قلم کردیئے

سعودی عرب نے ایک ہی دن میں 7 افراد کے سر قلم کردیئے
سعودی عرب نے ایک ہی دن میں 7 افراد کے سر قلم کردیئے

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ریاض (ویب ڈیسک) سعودی عرب میں دہشت گردی کے مرتکب 7 افراد  کو  سزائے موت  دے  دی گئی، مذکورہ 7 افراد کے دہشت گردی اور قومی سلامتی کو خطرے میں ڈالنے کے الزام میں گزشتہ روز  سر قلم کیے گئے۔

سعودی وزارتِ خارجہ کے مطابق مجرمان دہشت گرد تنظیمیں قائم کرنے اور ان کی مالی معاونت میں ملوث تھے، ان 7 افراد کی قومیت ظاہر نہیں کی گئی لیکن ان کے نام اور لقب سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ سعودی شہری تھے۔غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق ان 7 افراد کی سزائے موت پر عمل درآمد کے بعد رواں برس سعودی عرب میں 29 ملزمان کو سزائے موت دی جا چکی ہے۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کا کہنا ہے کہ سعودی عرب میں مارچ 2022ء میں ایک ہی روز 81 افراد کو سزائے موت دی گئی تھی جو ایک دن میں سب سے زیادہ تعداد ہے جبکہ اس سال سعودی عرب میں کل 196 افراد کی موت کی سزا پر عمل درآمد ہوا تھا۔غیر ملکی خبر ایجنسی کا کہنا ہے کہ سرکاری اعلانات کے مطابق مملکت میں مجموعی طورپر گزشتہ برس  170 افراد کی موت کی سزا پر عمل درآمد کیا گیا تھا۔

مزید :

عرب دنیا -