شہباز حسین چوہدری کا شاہ عبداللہ کی وفات پر دلی دکھ اور صدمے کا اظہار

شہباز حسین چوہدری کا شاہ عبداللہ کی وفات پر دلی دکھ اور صدمے کا اظہار
 شہباز حسین چوہدری کا شاہ عبداللہ کی وفات پر دلی دکھ اور صدمے کا اظہار

جدہ( خصوصی رپورٹ) پاکستان کے سابق وفاقی وزیر و سعودی فرمانروا خادم حرمین شریفین شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز کے دورہ پاکستان کے وزیر مہمانداری شہباز حسین چوہدری نے خادم حرمین شریفین شاہ عبداللہ کی وفات پر دلی دکھ اور صدمے کا اظہار کرتے ہوئے ان کی وفات مسلم امہ اور پاکستان کے لئے عظیم نقصان قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ وہ عالم اسلام کے رہنما تھے اور انہوں نے امہ کے مسائل کو ہمیشہ اولیت دی جبکہ پاکستان کے ہر مشکل وقت میں مدد دینے میں پیش پیش رہے اور تمام عالمی فورموں میں پاکستان کی حمایت کی جسے پاکستانی قوم صدیوں یاد رکھے گی۔ انہوں نے انکے درجات کی بلندی کی دعا کرتے ہوئے کہا کہ یہ ملت اسلامیہ کے لئے بہت بڑا صدمہ ہے۔ شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز ایک مدّبر، صاحب فراست اور آنے والے حالات پر نظر رکھنے والے رہنما تھے جبکہ ان کی قیادت میں سعودی عرب نے ترقی کے کئی زینے طے کئے جبکہ وہ مسئلہ فلسطین اور کشمیر کے حل کے لیے گوشاں تھے جبکہ ان کے مشرق وسطیٰ میں امن معاہدہ کوبڑی پذیرائی ملی جس میں اپنوں نے تمام متنازعہ مقبوضہ علاقوں سے اسرائیل کی واپسی اور فلسطینی پناہ گزینوں کی اقوام متحدہ کی قرارداد 194 پر عمل پر زور دیا تھا۔ شہباز چوہدری نے کہا کہ ان کے دورہ پاکستان میں ان کے ساتھ بطو ر وزیرمہمانداری کام کر کے انہیں بڑے قریب سے دیکھنے کا موقع ملا، ایسی شخصیتیں صدیوں میں پیدا ہوتی ہیں۔ سابق وفاقی وزیر نے خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز شہزاد مقر بن عبدالعزیز اور شہزادہ محمد بن نالیف کو نئے عہدے سنبھالنے پر مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ ان کی قیادت نہ صرف سعودی عرب مزید ترقی کرے گا بلکہ ملت اسلامیہ کو بھی وہ قیادت کریں گے تاکہ ملت کے اجتماعی طور پر مسائل حل ہوں۔

مزید : عالمی منظر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...