انصاف نہ ملا تو انقلاب مارچ کا اگلا پڑاؤ جاتی امراء ہو گا،خرم نواز گنڈا پور

انصاف نہ ملا تو انقلاب مارچ کا اگلا پڑاؤ جاتی امراء ہو گا،خرم نواز گنڈا پور

لاہور(نمائندہ خصوصی) عوامی تحریک کے مرکزی سیکرٹری جنرل خرم نواز گنڈاپور نے کہا ہے کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن پر ہمیں کوئی ادارہ انصاف نہیں دے رہا کیا ہم انصاف کیلئے عالمی عدالت انصاف سے رجوع کریں؟ 5 ماہ سے سانحہ ماڈل ٹاؤن پر بننے والے جوڈیشل کمیشن کی رپورٹ کی کاپی بھی نہیں دی جارہی ۔انہوں نے کہا کہ حکمران ظلم سے باز نہ آئے اور انصاف کے راستے میں اسی طرح رکاوٹ بنے رہے تو انقلاب مارچ کا اگلا پڑاؤ جاتی عمرہ ہو گا،اگر ہمارے شہید بچوں کے ماں باپ کو انصاف نہ ملا تو حکمرانوں کو بھی ان کے محلات میں چین کی نیند نہیں سونے دینگے، سانحہ ماڈل ٹاؤن پر انصاف کیلئے احتجاجی لائحہ عمل پر غور کر رہے ہیں، اس بار ایسا احتجاج ہو گا کہ آئندہ کیلئے کوئی طاقتور اقتدار کے نشہ میں ریاستی اداروں کے ذریعے نہتے اور امن پسند شہریوں پر ریاستی بندوقیں تاننے کی جرأت بھی نہیں کرسکے گا۔ گزشتہ روز بیرونی ملک کے دورے سے واپسی پر مرکزی سیکرٹریٹ میں اخبار نویسوں اور پارٹی عہدیداروں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمیں اشتہاری قرار دینے والے دہشتگردی کی معزز عدالت اور اس کے معزز جج سے درخواست ہے کہ بندے ہم نے نہیں مارے ہمارے لوگ شہید ہوئے ہیں اور انصاف ہمیں چاہیے، عدالت قاتلوں کی طرف سے درج کی گئی جھوٹی اور بے بنیاد ایف آئی آر کو ردی کی ٹوکری میں پھینک دے اور انصاف کا بول بالا کرے۔ہمیں نوٹس دینے کی بجائے انصاف دیا جائے، سانحہ ماڈل ٹاؤن کے جس کیس میں 4افراد کو ہماری طرف سے اشتہاری قرار دینے کی بات ہورہی ہے ان میں سے 3لوگ اس وقت پاکستان میں موجود ہی نہیں تھے۔ انہوں نے کہا کہ 5 ماہ ہو گئے سانحہ ماڈل ٹاؤن پر ہماری درج کروائی گئی ایف آئی آر پر غیر جانبدار تفتیش کا آغاز بھی نہیں ہو سکا

اور قاتلوں کی درج کروائی گئی جھوٹی ایف آئی آر پر سماعت جاری ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت دہشت گردی کی عدالتوں کو ان کے اصل مقاصد کیلئے استعمال کرنے کی بجائے سیاسی مخالفین کے خلاف استعمال کرنے سے ابھی بھی باز نہیں آرہی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1