دھرم پورہ،ایس ایچ او کا اہلکاروں سمیت گھر میں گھس کر تشدد

دھرم پورہ،ایس ایچ او کا اہلکاروں سمیت گھر میں گھس کر تشدد

 لاہور(کر ائم سیل)ایس ایچ او مصطفی آباد ڈیڑھ درجن سے زائد اہلکار لے کر شہری کے گھر گھس گیا ،خواتین سے بد تمیزی کر تے ہو ئے بوڑھی ماں پر تشدد کرتے رہے عدالتی احکامات دکھانے پر شہری پر غیر قانو نی تشدد کر تے ہو ئے تھا نے لے گئے،کاروائی نہ کر وانے کی یقین دہانی پر چھو ڑ دیا ۔متاثرہ شخص انصاف کے لیے درخواست لے کر سی سی پی او آفس گیا لیکن2ماہ بعد بھی انصاف نہ ملنے پر اپنے ساتھ ہو نے والی ظلم کی داستان آئی جی اور وزیر اعلیٰ تک پہنچانے کے لیے روز نامہ’’پاکستان‘‘ کے آفس پہنچ گیا۔تفصیلا ت کے مطابق دھرم پورہ کے رہائشی متاثرہ شخص آصف نے روز نامہ ’’پاکستان‘‘سے گفتگو کر تے ہو ئے کہا کہ 15نو مبر کی رات ایس ایچ او مصطفی ناصر چھٹہ ددیگر اہلکاروں کے ہمراہ ہمارے گھر میں گھس آیا اور ہمارے نا خلف بھائی جس کو ہم نے عاق کر دیا ہے کہ بارے میں پو چھنے لگے ہم نے بتایا کہ ہم نے اسے عاق کر دیا ہے اور عدالت کے کاغذات بھی دکھائے جس پر پولیس نے ہمیں تشدد کا نشانہ بنا یا اور خواتین سے بد تمیزی بھی کی میرے احتجاج کر نے پر مجھے لے کر تھانے لے گئے اور بعدازاں معززین علا قہ کی مداخلت پر مجھے رہا ئی ملی۔جس کے بارے میں میں نے سی سی پی او کو انصاف کے حصول کے لیے درخواست دی وہا ں بھی ہمیں دو ماہ بعد بھی انصاف نہ مل سکا ۔میری وزیراعلیٰ اور آئی بنجاب سے اپیل ہے کہ خدار میرے حال پر رحمکر تے ہو ئے ہمیں انصاف فراہم کیا جا ئے۔

مزید : علاقائی