غیر معیاری اسٹنٹس ،پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کا اظہار تشویش

غیر معیاری اسٹنٹس ،پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کا اظہار تشویش

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن (پی ایم اے) پنجاب کے زیادہ تر سرکاری ہسپتالوں میں دل کی سرجری میں غیر رجسٹرڈ اور غیر معیاری سٹنٹ استعمال کرنے کے واقعات پر گہری تشویش کا اظہار کرتی ہے جبکہ ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی ملک بھر میں 55سے زائد ایسی مصنوعات کو رجسٹرریشن دے چکی ہے۔اس غیر قانونی اور غیر اخلاقی عمل سے پاکستان کے لوگوں کو لوٹا جارہا ہے یہ لوٹ کھسوٹ بغیر کسی رکاوٹ کے جاری ہے اور تقریباً 7000 روپے مالیت کا سٹنٹ مریضوں کو 125,000 سے 200,000 روپے تک بیچا جا رہا تھا۔پی ایم اے اس معاملے پر سپریم کورٹ کی جانب سے لئے گئے سوموٹو ایکشن کا خیر مقدم کرتی ہے۔ اور ہم امید کرتے ہیں کہ عوام کو زیادہ بہتر طبی سہولتیں فراہم کرنے کے لئے ہمارے ہیلتھ ڈیلیوری سسٹم میں موجود دیگر بڑی جعل سازیوں کا نوٹس بھی جلد لیا جائے گا۔پی ایم اے مطالبہ کرتی ہے کہ مریضوں کی جانب سے ادا کی گئی زائد رقوم فور ی طور پر واپس کروائی جائیں۔ حکومت عوام کی صحت کے لئے تمام ہسپتالوں میں اعلی معیار کے سٹنٹ فراہم کرے۔ اس دھوکہ دہی میں ملوث تمام ملزمان کو قانون کے کٹہرے میں لایا جائے چاہے ان میں ڈاکٹر کیوں نہ شامل ہوں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -