پیڈا ایکٹ کے تحت کارروائی کا عندیہ ‘ اساتذہ تنظیموں کا شدید رد عمل

پیڈا ایکٹ کے تحت کارروائی کا عندیہ ‘ اساتذہ تنظیموں کا شدید رد عمل

  

ملتان (سٹاف رپورٹر) حکومت پنجاب کی طرف سے پنجاب ایگزامنیشن کمیشن کے تحت جماعت پنجم اور ہشتم کے امتحانات کی ڈیوٹی کا بائیکاٹ کرنے والے اساتذہ کے خلاف پیڈا ایکٹ(بقیہ نمبر23صفحہ12پر )

کے تحت کارروائی کا عندیہ دینے پر اساتذہ تنظیموں نے بھی شدید ردعمل ظاہر کر دیا‘ اس سلسلے میںیونائیٹڈ ٹیچرز کونسل پنجاب کا اجلاس لاہور میں منعقدہوا جس کی صدارت طارق محمود کنوینرنے کی‘ اجلاس میں کہا گیا کہ متفقہ طور پر پورے پنجاب میں دو فروری سے پیک کے امتحان کا مکمل بائیکاٹ کیا جائے گا۔‘اس کیساتھ تدریس، اضافی ڈیوٹیوں اور دیگر امور کا بھی بائیکاٹ کیا جائیگا۔ ہم نہ ڈرنے والے ہیں ، نہ جھکنے والے ہیں اور نہ ہی بکنے والے ہیں ۔ حکومت کی طرف سے نافذ کی جانے والی ظالمانہ تعلیم دشمن اور استاد کش پالیسیوں کو واپس کروا کر دم لیں گے‘ اجلاس میں اللہ بخش قیصر ، حافظ غلام محی الدین ، رشید احمد بھٹی ، کاشف شہزاد، وحید مراد، اشفاق نسیم ، حاجی انور ، لطیف ندیم ، بھی شریک تھے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے تمام دوستوں کو دعوت اتحاد دی ہے مگر کچھ لوگوں نے حکومت پنجاب کی طرح میں نہ مانوں کی پالیسی اختیار کرکے اساتذہ کے مقاصد کو سبوتاژ کرنے کا عندیہ دیا ہے جو کہ قابل مذمت ہے ‘ دریں اثنا یونائیٹڈٹیچرز کونسل کے کنوینرطارق محمود‘ حافظ غلام محی الدین ‘ امتیاز احمد عباسی‘ کاشف شہزاد‘ حافظ عبدالناصر‘ اللہ بخش ناصر ‘ رشید احمد‘محمد اجمل‘ رانا اسلم ساغر اور طیب بودلہ نے بیان میں دیگر اساتذہ تنظیموں سے بھی کہا ہے کہ وہ پنجم اور ہشتم کے امتحانات کی ڈیوٹی اور اور سکولوں میں تدریسی بائیکاٹ میں ساتھ دیں۔

رد عمل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -