پنجابی بولنے پر پابندی، بیکن ہاؤس سکول نے اقدام پر عدالت سے معافی مانگ لی

پنجابی بولنے پر پابندی، بیکن ہاؤس سکول نے اقدام پر عدالت سے معافی مانگ لی

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی ) لاہور ہائی کورٹ کے روبرو بیکن ہاؤس سکول سسٹم انتظامیہ نے پنجابی زبان پرپابندی عائد کرنے پر غیر مشروط معافی مانگ لی جس پر چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ نے اس سلسلے میں دائر درخواست نمٹادی ،عدالت نے قرار دیا کہ پنجابی زبان پر پابندی کا معاملہ حساس ہے،آئندہ پابندی عائد کی گئی تو عدالت اپنا حکم صادر کرے گی۔ عدالت میں پنجابی پرچار سوسائٹی کی جانب سے طاہر محمود سندھو نے بتایا کہ بیکن ہاوس سکول انتظامیہ نے سکول میں زیر تعلیم طالب علموں پرپنجابی زبان بولنے پر پابندی عائد کر دی ہے، ،اقدام سے طالب علم مادری زبان کا تشخص کھو دیں گے۔عدالتی حکم پر بیکن ہاؤس انتطامیہ کے افسران نے عدالت سے غیر مشروط معافی مانگتے ہوئے آئندہ اس قسم کی پابندی نہ لگانے کی یقین دہانی کرائی ۔

مزید :

صفحہ آخر -