گلوبل انسٹیٹیوٹ کے گیر رجسٹرفرنچائیزڈ کیمپسز کو کام سے روک دیا گیا

گلوبل انسٹیٹیوٹ کے گیر رجسٹرفرنچائیزڈ کیمپسز کو کام سے روک دیا گیا

  

 لاہور)حافظ عمران انور ) پنجاب ہائیر ایجوکیشن کمیشن (PHEC) نے ناقص کارکردگی اور ناکافی سہولیات پر گلوبل انسٹی ٹیوٹ کے 19 غیر رجسٹرڈ ملحقہ / فرنچائیز ڈ کیمپسز کوکام کرنے سے روک دیا ۔ تفصیلات کے مطابق پنجاب ہائیر ایجوکیشن کمیشن نے پی ایچ ای سی ایکٹ 2014 کے تحت دیئے گئے مینڈیٹ کی رو سے ماہرین تعلیم، سابقہ وائس چانسلرز اور پالیسی میکرز پر مشتمل خصوصی کمیٹی نے ایمپریل یونیورسٹی ،ہجویری یونیورسٹی ،یو نیورسٹی آف سنٹرل پنجاب ،یونیورسٹی آف فیصل آباد کا دورہ کیا ۔کمیٹی نے ناقص کارکردگی اور ناکافی سہولیات پر گلوبل انسٹی ٹیوٹ کے 19 غیر رجسٹرڈ ملحقہ / فرنچائیزز ڈ کیمپسز کوکام کرنے سے روک دیا۔علاوہ ازیں ہجویری یونیورسٹی کے دو پروگراموں فیکلٹی آف فارمیسی اور فیکلٹی آف انجینئرنگ کی رجسٹریشن منسوخ کر دی۔ اس کے علاوہ کمیٹی نے یو نیورسٹی آف سنٹرل پنجاب میں قائم ماس کمیونیکیشن ڈیپارٹمنٹ کو تدریسی امور کے لئے اجازت دے دی ۔اس حوالے سے بات کرتے ہوئے ڈائریکٹر جنرل ایکریڈیٹیشن (PHEC) ضیاء بتول نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ پنجاب ہائیر ایجوکیشن کمیشن تعلیمی اداروں کوبین الاقوامی معیار کے برابر لانے کے لئے پنجاب بھر میں یونیورسٹیز کا دورہ کر رہی ہے س حوالے سے کمیشن معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں کرے گا۔ محترمہ ضیاء بتول نے بتایا کہ پنجاب ہائیر ایجوکیشن کمیشن اعلی تعلیمی اداروں کے معیار کی جانچ پڑتال میرٹ پر کرے گی اور اس ضمن میں کوئی دباؤ قبول نہیں کیا جائے گا ۔ دوران گفتگو انہوں نے کہا کہ ڈگری پروگرامز اور غیر منظور شدہ کیمپسز کے متعلق شکایات موصول ہونے پر پنجاب بھر کی یونیورسٹیز کا دورہ کیا جس میں گلوبل انسٹیٹیوٹ لاہور کے دورہ کے دوران متعلقہ ادارہ کوتعلیمی و دیگر سہولیات کے مقررکردہ معیار پر پورا نہ اترتے پایا گیا۔ جس کی بابت قومی اخبارات میں والدین اور طلباء کے لیے ایک انتباہی نوٹس بھی دینے کا فیصلہ بھی کیا گیا۔ انہوں نے مزید بتایا کہ گلوبل انسٹیٹیوٹ کے19 غیر رجسٹرڈ ملحقہ / فرنچائیزز ڈ کیمپسز کوبھی کام کرنے سے روک دیا گیاہے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -