ایڈیشنل سیشن جج کی عدالت میں جھگڑنے والے وکلاءکے نام منظر عام پر آگئے

ایڈیشنل سیشن جج کی عدالت میں جھگڑنے والے وکلاءکے نام منظر عام پر آگئے
ایڈیشنل سیشن جج کی عدالت میں جھگڑنے والے وکلاءکے نام منظر عام پر آگئے

  

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج سعد رفیق کی عدالت میں آپس میں جھگڑنے والے وکلاءکے نام منظر عام پر آگئے ہیں۔معلوم ہوا ہے کہ جھگڑا ایک کیس کی سماعت کے دوران ہوا۔

TapMad نے ہمہ وقت سرگرم رہنے والوں کے لئے انٹرٹینمنٹ کی نئی دنیا متعارف کروادی

ذرائع کے مطابق معلوم ہوا ہے کہ عدالت میں دوران سماعت میاں ذیشان ایڈووکیٹ نے تلخ کلامی پر خواجہ شہزاد کو تھپڑ مارا جس پر خواجہ شہزاد ااوران کے ساتھی وکلاءمیاں عبدالجبار اور نعمان وغیرہ مشتعل ہوگئے جس کے باعث کمرہ عدالت میدان جنگ بن گیا،پھر جس کے ہاتھ جو لگا اس نے اٹھا کر مخالف فریق کو ماردیا ،وکلاءصرف لاتوں اور گھونسوں تک ہی محدود نہیں رہے بلکہ ایک دوسرے پرکرسیوں سمیت ہر چیزکابے دریغ استعمال کیا گیاجس کے باعث 3 وکلاءبھی زخمی ہو گئے۔یاد رہے کہ وکلاءکی طرف سے عدالتی تقدس پامال کرنے کا یہ پہلا واقعہ نہیں بلکہ اس سے قبل بھی وکلاءکی طرف سے سائلین اورپولیس اہلکاروں کو تشدد کا نشانہ بنا چکے ہیں جبکہ فاضل ججز کے ساتھ بھی بدتمیزی اور بدکلامی کے واقعات رونما ہوئے ہیں لیکن پنجاب بار کونسل ایسے وکلاءکے خلاف کارروائی کی بجائے خاموشی اختیار کئے ہوئے ہے ۔

مزید :

لاہور -