قندوز: 4 ماہ کے شیر خوار کے جسم سے لپٹا بارود برآمد ،خاتون سمیت5افراد گرفتار

قندوز: 4 ماہ کے شیر خوار کے جسم سے لپٹا بارود برآمد ،خاتون سمیت5افراد گرفتار

قندوز(مانیٹرنگ ڈیسک) دہشت گردوں کے ظلم و ستم کے قصے ہم اکثر سنتے رہتے ہیں لیکن انسانیت کے احساس سے عاری یہ درندے کتنے سفاک ہو سکتے ہیں اس کا اندازہ افغانستان میں پیش آنے والے ایک واقعے سے بخوبی کیا جا سکتا ہے۔میل آن لائن کے مطابق قندوز شہر میں داخل ہونے والے پانچ افراد کو چیک پوسٹ پر روک کر تلاشی لی گئی تو ایک ایسا ہولناک انکشاف سامنے آگیا کہ دیکھ کر سکیورٹی اہلکاروں کے ہوش اڑ گئے۔ان افراد میں ایک خاتون بھی شامل تھی جس نے ایک ننھا بچہ اٹھا رکھا تھا۔ ابتدائی طور پر تو اہلکاروں نے خاتون کی جانب توجہ نہیں کی لیکن ایک اہلکار نے جونہی اس کے بچے کو غور سے دیکھا تو اس کا ماتھا ٹھنکا۔ موٹے کپڑوں میں لپٹے بچے کو اس نے فوراً خاتون سے لیا اور اس کے گرد لپٹے کپڑے ہٹانے لگا۔ تب ہی وہ انکشاف سامنے آیا کہ دیکھنے والوں کے رونگٹے کھڑے ہو گئے۔ اس چار ماہ کے بچے کے جسم کے ساتھ بارودی مواد لپٹا ہوا تھا، جسے اس کے لباس نے چھپا رکھا تھا۔ بدبخت درندے شہر میں دھماکہ کرنے کے لئے بارودی مواد اس شیرخوار کے جسم سے لپیٹ کر لے جا رہے تھے تا کہ کسی کو شک نا پڑے۔ یہ لرزہ خیز انکشاف سامنے آتے ہی پولیس نے پانچوں افراد کو حراست میں لے لیا۔ سکیور ٹی حکام کا کہنا ہے کہ ملزمان کو نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا گیا ہے اور ان کے خلاف قانونی کاروائی جاری ہے۔

مزید : علاقائی