یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر بھی تادم مرگ دھرنا دیں گے،راجہ شبیر

یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر بھی تادم مرگ دھرنا دیں گے،راجہ شبیر

مظفرآباد(بیورورپورٹ) اکلاس ایمپلائز پروگریسو یونین کے مرکزی صدر راجہ شبیر خان نے کہا کہ 5 فروری یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر بھی تادم مرگ دھرنا دیں گے ۔وزیراعظم پاکستان شاہدخاقان عباسی کی مظفرآباد آمد پر شدید احتجاجی مظاہرہ کریں گے ۔ حکومت گولڈن ہینڈٖ شیک نوٹی فیکشن پر عمل درآمد کرے ۔ ملازمین کے اپ مذید جنازے نہیں اٹھائیں گے ۔ پیر 29 جنوری سے ضعیف العمر پنشنر بزرگ، خواتین ،بچے بھی دھرنا میں شامل ہونگے ۔ 25 ملازمین تنظیموں کا اتحا د جائنٹ سپریم کونسل کی بھی اکلاس ملازمین کو حمایت حاصل ہوچکی ہے جبکہ سیاسی مذہبی دینی جماعتوں کے علاوہ تاجر برداری سول سوسائٹی شانہ بشانہ کھڑی ہوچکی ہے ۔ ان خیالات کا اظہار راجہ شبیر خان ، سردار اسرار احمد ،چوہدری میر محمد ، خواجہ پرویز احمد ، راجہ نادر خان ، بدیع زمان چغتائی ،غلام رسول قریشی ، راجہ امتیاز خان خادم حسین ، جمیل عباسی ، چوہدری ارشد محمود ،چوہدری محمد عزیز ، سردار رشید سرور اور دیگر نے دھرنا کیمپ سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔مقررین نے کہا کہ دھرنا کو آج 7 دن ہوچکے ہیں لیکن حکمران بیورکرٹس ہمارے درینہ اور اہم مسئلہ پر خاموش تماشاہی بنے ہو ہیں ہم اس بار حکومت نوٹی فیکشن پر عمل درآمد کروا کر دم لیں گے ۔ دھرنا کسی صورت ختم نہیں ہو گا ہم اپنے جائز حق سے دستبردار نہیں ہونگے حکومت سنجیدگی کا مظاہرہ کرے حکومت تسلیم شدہ نوٹی فیکشن شدہ مطالبات پورے کرے ہماری شرافت کو کمزوری نہ سمجھا جائے ہمارے خون پسینے سے بنائے گی اثاثے موجود ہیں حکومت ان اثا ثو ں کو رکھ لے اور حکومت گولڈ ہینڈ شیک نوٹی فیکشن پر عمل درآمد کرے ۔ اکلاس کے ملازمین کو نارمل میزانیہ پر لائے اور ان کے مستقبل کو تباہ ہونے سے بچاہے اکلاس ملازمین اپنے حقوق کے لئے پہلے ہی ملازمتوں کی قربانی دے چکے ہیں اب جانوں کی قربانی کے لئے بھی تیار ہیں ۔ اور تادم مرگ دھرنا مطالبات کی منظوری پر جاری رہے گا اگر پھر بھی یک نکاتی مطالبہ کو پورانہ کیا گیا تو پھر اسلام آباد کی طرف رخ کریں گے ۔ڈی چوک اسلام آباد میں خاندانوں سمیت احتجاجی کیمپ لگائیں گے

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر