وزیراعلی خیبرپختونخوا بی آر ٹی کی منصوبہ بندی سے ناخوش،کام وقت پرمکمل نہ ہواتوذمہ داروں کے خلاف ایکشن لوں گا:محمود خان

وزیراعلی خیبرپختونخوا بی آر ٹی کی منصوبہ بندی سے ناخوش،کام وقت پرمکمل نہ ...
وزیراعلی خیبرپختونخوا بی آر ٹی کی منصوبہ بندی سے ناخوش،کام وقت پرمکمل نہ ہواتوذمہ داروں کے خلاف ایکشن لوں گا:محمود خان

  


پشاور (ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعلی خیبرپختونخوا محمودخان نے پشاوربس رپیڈ ٹرانزٹ(بی آر ٹی)میں پلاننگ کاشکوہ کیا ہے اور مقررہ مدت تک کام مکمل نہ ہونے پرکارروائی کی دھمکی دیدی ہے۔

نجی ٹی وی کے مطابق وزیراعلی خیبرپختونخوا نے بی آرٹی منصوبے کی 23 مارچ تک تکمیل کے لئے سرگرم ہو گئے ہیں اسی بابت انہوں نے بی آر ٹی منصوبے کا   جائزہ لینے کے لیے دورہ کیا اور منصوبے کی پلاننگ اور کام کی رفتار پر عدم اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے کھلے لفظوں میں وارننگ بھی دے دی ،اس موقع پر وہ منصوبے کی پلاننگ سے ناخوش نظر آئے۔وزیراطلاعات خیبرپختونخوا شوکت یوسفزئی نے وزیراعلی کو بتایا کہ منصوبے پرتیزی سے کام ہورہا ہے جس پر انہوں نے جواب دیا کہ کام تو تیز ہے لیکن منصوبے کی پلاننگ درست نہیں ہے۔محمودخان نے منصوبے پر کام کرنے والی کمپنی کو ہر صورت مقررہ وقت میں مکمل کرنے کی ہدایت کی اور کہا کہ منصوبے کا جائزہ لینے کے لیے ہفتے میں ہر دو روز بعد اجلاس بھی بلایا جائے گا،وزیراعلی خیبرپختونخوا نے دھمکی دیتے ہوئے کہا کہ اگرکام وقت پرمکمل نہ ہواتوذمہ داروں کے خلاف ایکشن لوں گا۔واضح رہے کہ سابق وزیراعلی خیبرپختونخوا پرویزخٹک نے 20 اکتوبر 2017 کو منصوبے کا سنگ بنیاد رکھتے ہوئے چھ ماہ میں مکمل کرنے کا وعدہ کیا تھا لیکن منصوبے کو اب دو سال ہوچکے ہیں،تاخیر، پلاننگ کی کمی اور ڈیزائن میں تبدیلی کے باعث منصوبے کی لاگت 49ارب ڈالرسے بڑھ کر63ارب ڈالرتک پہنچ چکی ہے۔اسی سلسلے میں 22 جنوری کو فرانس حکومت کی جانب سے بھی خیبرپختونخوا حکومت کو منصوبے کے لیے 19 ارب 50 کروڑ روپے قرضہ دینے کااعلان کیا گیا ہے۔

مزید : علاقائی /خیبرپختون خواہ /پشاور