پانی چوری سکینڈل ‘ ایس ای کی چیف انجینئر کو فوری کارروائی کی ہدایت

پانی چوری سکینڈل ‘ ایس ای کی چیف انجینئر کو فوری کارروائی کی ہدایت

بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر) پانی چوری سیکنڈل میں ملوث ایکسین ایس ڈی اوز کیخلاف پی ایم آئی یوکی رپورٹ کی روشنی میں ایس ای انہارنے چیف انجینئرکوکاروائی کی ہدایت کردی تفصیل کے مطابق رواں سیزن کے دوران پنجاب مانیٹرنگ ایری گیشن یونٹ نے چھاپے مارکے کینال (بقیہ نمبر46صفحہ7پر )

ڈویژن بہاولپورکے علاقے کینال سب ڈویژن شاہی والاکینال سب ڈویژن قائم پور اورکینال سب ڈویژن بغدادکی نہروں کے سینکڑوں شکستہ موگے پکڑکررپورٹ اعلی حکام کوارسال کردی تھی جس کی روشنی میں ایس انہار سرکل بہاولپور نے ایک لیٹرنمبری9347-78 مورخہ29 دسمبر2018 چیف انجینئر انہارکوبھجوایا جس میں انہوں نے سابق ایکسین بہاولپورکینال ڈویژن عبدالواحد ایس ڈی اوشاہی والامعین چشتی ایس ڈی اوقائم پور حق نواز اوردیگرکیخلاف کاروائی کی سفارش کی تھی چیف انجینئر انہاربہاولپورزون عابدمسعودنے مبینہ طورپر مذکورہ بالاافسران کوتحفظ فراہم کرتے ہوئے کوئی کاروائی نہ کی ہے بلکہ اس سالانہ نہربندی کے دوران نہر3 ایل بی سی اوردیگرنہروں پرتعینات سب انجینئر زنے کاشتکاروں کوموگوں کے سائز بڑھانے کی اجازت دے کرفی موگہ80 ہزار سے ایک لاکھ روپے تک وصول کیے ہیں اوراس طرح کروڑوں روپے اکٹھے کرکے آئندہ پانی چوری کرانے کی منصوبہ بندی مکمل کرلی ہے چیف انجینئر نے تاحال ایک بھی سب انجینئر اورایس ڈی اوکومعطل نہ کیاہے اس سلسلہ میں جب چیف انجینئر عابد مسعود سے رابطہ کیاگیاتوانہوں نے کہاکہ پی ایم آئی یو کی کاروائی کااپناسسٹم ہے جب ہم ٹوٹے ہوئے موگے پکڑیں گے توضرورکاروائی کرینگے ایس ای انہارکی رپورٹ پرکاروائی نہ کرسکتے ہیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر