عمران خان یا پارٹی کو کوئی خطرہ نہیں ،امریکہ طالبان مذاکرات کامیاب ہوئے تو پاکستان کو بھی فائدہ ہوگا ،فواد چودھری

عمران خان یا پارٹی کو کوئی خطرہ نہیں ،امریکہ طالبان مذاکرات کامیاب ہوئے تو ...

دبئی (مانیٹرنگ ڈیسک)وزیراطلاعات فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ پاکستان کی اندرونی سیاست میں عمران خان یا پی ٹی آئی کوکوئی خطرہ نہیں ہے ۔دبئی میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے وفاقی وزیراطلاعات ونشریات فواد چوہدری کا کہنا تھا ہم نہ صرف سویلین اداروں کو بہتراو ر مضبو ط کررہے ہیں بلکہ پاکستان کے اندرونی مسائل پربھی توجہ دے رہے ہیں، پیپلزپارٹی اور (ن) لیگ پرکرپشن کے الزامات ہم نے نہیں لگا ئے۔ گزشتہ کچھ برسوں سے مشرق وسطیٰ کی سیاست میں کردار کم ہورہا تھا، اب ہماری حکومت کا فوکس امارات اور دیگر مشرق وسطیٰ میں اچھے تعلقات ہے، ہم امارات اور سعودی عرب سے اچھے تعلقات کی کوششوں میں ہیں، عمران خان کی پالیسیوں کی وجہ سے پاکستان مشرق وسطیٰ کے معاملے میں واپس آیا ہے، کوشش ہے پاکستان کو دنیا کیلئے کھولا جائے اور ہم چاہتے ہیں لوگ سیاحت اورکاروبار کیلئے پاکستان آئیں، جبکہ ہماری امن کی پالیسی ہے جس سے پاکستان کے لوگوں کا فائدہ ہوگا، ہم نے آتے ہی کرتا رپورسرحد کھولی۔ ہم نے پہلے متحدہ عرب امار ا ت اور اب قطر میں افغان طالبان اور امریکہ کیلئے مذاکرات کرائے ہیں اور مذکرات کی کامیابی کی صورت میں امریکہ ہی نہیں پاکستان کو بھی وسیع تر فوائد حا صل ہوں گے۔بعد ازاں متحدہ عرب امارات کے اخبار کو انٹرویو میں وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چودھری کاکہنا تھا حکومت اور فوج ایک پیج پر ہیں،بھارت سے بات چیت موخر کردی، موجودہ بھارتی قیادت کی طرف سے کسی بڑے فیصلے کی توقع نہیں ہے ، بھارت میں الیکشن کی وجہ سے بات چیت کیلئے مناسب وقت نہیں ، بھارتی الیکشن کے بعد مودی کی حکومت ہو یا راہو ل گاندھی کی ، بات چیت کیلئے تیار ہیں۔ پاکستان میں ہر بڑی پالیسی اتفاق رائے سے بنائی جارہی ہے ، طالبان کو مذاکرات کی میز پر لانے سے ٹرمپ پاکستان سے خوش ہیں اور خوش ہونے کی وجہ سے ہی ٹرمپ نے پاکستان کے بارے میں پالیسی تبدیل کی ۔ عمران خان کی امریکی صدر کے ساتھ ملاقات افغان امن مذاکرات کے بعد ممکن ہے۔

فواد چوہدری

مزید : صفحہ اول