طالبان پر پاکستان سے زیادہ ایران کااثر و رسوخ ہے :حامد میر کا دعویٰ

طالبان پر پاکستان سے زیادہ ایران کااثر و رسوخ ہے :حامد میر کا دعویٰ
طالبان پر پاکستان سے زیادہ ایران کااثر و رسوخ ہے :حامد میر کا دعویٰ

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) تجزیہ کار حامد میر نے کہاہے کہ اس وقت افغان طالبان پر پاکستان سے زیادہ ایران کا زیادہ اثرو رسوخ ہے ، ان کو ایران سے اسلحہ اورامداد ملتی ہے ، قطر میں طالبان دفتر کو ایران کی حمایت حاصل ہے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”آج شاہ زیب خانزادہ کے ساتھ“ میں گفتگو کرتے ہوئے حامد میر نے کہاہے کہ اس وقت افغان طالبان پر پاکستان سے زیادہ ایران کا اثر رسوخ ہے ، ان کو ایران سے اسلحہ اورامداد ملتی ہے ، قطر میں طالبان دفتر کو ایران کی حمایت حاصل ہے ، اس لئے اب افغان امن کے لئے ایران کو بھی آن بورڈ لینا ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ داعش کی وجہ سے طالبان اور ایران میں اتحاد ہوگیاہے ، اس سے لئے امریکہ کوچاہئے کہ ایران کو بھی آن بورڈ لیکر آئے تاکہ افغانستان سے انخلاءکے وقت افغانستان میں خانہ جنگی کا خطرہ کم ہوسکے ۔

ان کاکہنا تھا کہ بہت سے طالبان رہنما پاکستان کی قید میں انتقال کرگئے جس سے طالبان کے ساتھ پاکستان کے تعلقات پہلے جیسے نہیں رہے ، مذاکرات کی کامیابی کی صورت میں اگر امریکی انخلاءہوگیا تو فوری طور پر افغانستان میں امن قائم ہونے کے امکانات بہت کم ہیں ، اس وقت یہ خدشات موجودہیں کہ امریکی فوج کے نکلنے پر افغانستان میں خانہ جنگی ہوسکتی ہے ، اس لئے پاکستان چاہتاہے کہ امریکہ نکلتے وقت افغانستان میں موجود حکومت کے ساتھ ملکر افغانستان کی تعمیر نوکرے ۔

مزید :

قومی -