فوڈ سیفٹی ٹیموں کی کارروائیاں ‘3پروڈکشن یونٹس سیل

  فوڈ سیفٹی ٹیموں کی کارروائیاں ‘3پروڈکشن یونٹس سیل

  



ملتان (سٹاف رپورٹر) فوڈ سیفٹی ٹیموں نے زائدالمیعاداشیائے خورونوش فروخت کرنیوالوں کیخلاف کارروائیاں کرتے ہوئے3(بقیہ نمبر39صفحہ7پر)

پروڈکشن یونٹس کو سیل کردیا۔تفصیلات کیمطابق فوڈسیفٹی ٹیموں نے ملتان سمیت مختلف علاقوں میں کارروائیوں کے دوران 160 فوڈ پوائنٹس کی چیکنگ کی۔پروڈکشن ایریا میں بلیوں کی موجودگی، کیمیکل ڈرمز، ناقابلِ سراغ رنگوں کے استعمال پرریحان فوڈ اور غوثیہ فوڈزکو سیل کردیا۔مزید برآں غیر معیاری سٹوریج،مضر صحت اجزاء کے استعمال اور ملازمین کے میڈیکلزکی عدم دستیابی پر کرسپو کچا پاپڑ یونٹ کو سر بمہر کیا گیا۔علاوہ ازیں فوڈ سیفٹی ٹیموں نے بہاولپو ر اور ملتان کے گردونواح میں کارروائیوں کے دوران سابقہ ہدایات پر عمل نہ کرنے،غیر معیاری اشیاء کی فروخت اورصفائی کے ناقص انتظامات پر 26,000کے جرمانے عائد کیے۔ ڈی جی خان،لیہ اور گردونواح میں پنجاب فوڈ اتھارٹی قوانین کی خلاف ورزیوں پر 24,000کے جرمانے عائد کیے گئے۔ جنوبی پنجاب کے مختلف علاقوں میں چیکنگ کے دوران بھاری مقدار میں زائد المیعاد اشیائے خورونوش،کیمیکلز،حشرات زدہ مٹھائیاں اور مضر صحت خوراک کو تلف کیا گیا۔ مزید برآں فوڈ سیفٹی ٹیموں نے حفظانِ صحت کے اصولوں کی خلاف ورزیوں پر متعدد فوڈپوائنٹس کو وارننگ نوٹس بھی جاری کیے۔ ڈی جی فوڈ اتھارٹی کا کہنا تھا کہ ایکسپائرڈ، ناقص خوراک کھانے سے ٹائیفائیڈ،فوڈ پوائیزننگ اور ڈائیریا جیسی بیماریاں پیدا ہوتی ہیں۔

سیل

مزید : ملتان صفحہ آخر