وہاڑی‘ سکول گار ڈ کا شہری پر تشدد متاثرہ شخص کی ڈی پی او کو درخواست

  وہاڑی‘ سکول گار ڈ کا شہری پر تشدد متاثرہ شخص کی ڈی پی او کو درخواست

  



وہاڑی(بیورورپورٹ +نمائندہ خصوصی)شہری کوسکول گیٹ پر فون سننا مہنگا پڑگیا سکول گارڈ و ساتھی آپے سے باہر،گارڈ کی مبینہ (بقیہ نمبر44صفحہ7پر)

بدتمیزی کرنے پر معاملہ دست و گریبان تک جاپہنچا،گارڈ کی فائرنگ اورساتھیوں کے ہمراہ تشدد سے شہری زخمی ہوگیا، ایس ایچ او تھانہ دانیوال نے موقع پر پہنچ کر گارڈ کوگرفتار کرنے کی بجائے موقع سے فرار کروادیا،شہری نے میڈیکل کرانے کے بعد انصاف کے لئے ڈی پی او کو درخواست دے دی تفصیل کے مطابق شہری محمد سہیل ایڈووکیٹ ولد محمد مالک بھٹی نے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر اختر فاروق کو دی گئی درخواست میں موقف اختیار کیا ہے کہ وہ حیدر کالونی دانیوال کا رہائشی ہے اور ڈسٹرکٹ بار کا رکن ہے گزشتہ روز دوپہر کے وقت جناح روڈ سے گزر رہا تھا کہ گورنمنٹ ماڈل ہائی سکول کے سنے دوست کی کال سننے کیلئے گیٹ کے سامنے رکا تو عبدالرووف مودودی اور سکول گارڈ شفیق بدکلامی پر اتر آئیوجہ پوچھنے پر دونوں طیش میں آگئے اور عبدالروف کہنے لگا اسے سکول کے سامنے رکنے کا مزا چکھاو اور مجھے زبردستی اغواء کرکے سکول کے اندر لے جانے لگے مزاحمت کرنے پر سیکیورٹی گارڈ نے اپنے رپیٹر سے فاء کردیا جس سے وہ زخمی ہوگیا جبکہ گارڈ کے ساتھی غلیظ زبان استعمال کرتے ہوئے تشدد کا نشانہ بناتے رہے اسی دوران ایس ایچ او تھانہ دانیوال مرزا رحمت علی موقع پر آیااور آتے ہی میرے ساتھ تلخ کلامی کرتے ہوئے فائرنگ کرنے والے سیکیورٹی گارڈ اورساتھیوں کو موقع سے فرار کروادیا سکول گارڈ اور ساتھیوں سمیت ایس ایچ او تھانہ دانیوال نے بھی فرائض سے روگردانی کرتے ہوئے ملزم کو موقع سے فرار کروایا ہے لہذا تینوں کے خلاف قانونی کاروائی کی جائے۔

درخواست

مزید : ملتان صفحہ آخر