ضلع کچہری میں سکیورٹی انتظامات زیرو‘ 8مارچے خالی ہونیکا انکشاف

  ضلع کچہری میں سکیورٹی انتظامات زیرو‘ 8مارچے خالی ہونیکا انکشاف

  



ملتان (خبر نگار خصوصی)ملتان ڈسٹرکٹ بار سیکیورٹی مسائل سے دوچار ہے۔کچہری میں چار ماہ پہلے سیکیورٹی کے لئے نئے بنائے گئے 8 مورچوں پر اہلکار تعینات نہیں کئے جا سکے ہیں۔(بقیہ نمبر40صفحہ12پر)

کچہری کے 8 گیٹس پر دن میں 29 پولیس اہلکار سیکیورٹی کے فرائض سر انجام دیتے ہیں جبکہ مختص کردہ تعداد 36 ہے۔ کچہری میں روزانہ 20 ہزار کے لگ بھگ شہریوں کی آمد و رفت ہوتی ہے۔کچہری کے نیشنل بینک کے ساتھ والا دروازہ کھلا اور سیکیورٹی اہلکار تعینات نہیں ہیں۔اسٹام فروشوں کے بلاک میں جانے والے راستے کی دیوار ٹوٹ پھوٹ کا شکار اور سیکیورٹی کے انتظامات بھی نہ ہونے کے برابر ہیں۔کچہری میں سیکیورٹی نفری کی کمی کے باعث وکلاء اور سائیلین پریشان ہیں۔کچہری میں 52 عدالتوں میں روزانہ 6 ہزار کے لگ بھگ کیسز پر سماعت ہوتی ہے۔وکلاء کا کہنا ہے کہ کچہری میں جگہ جگہ بنائی گئی کینٹینز اور ڈھابے سیکیورٹی خطرے کی علامت ہیں۔وکلاء چیمبرز اور گیٹس پر مزید سی سی ٹی وی کیمرے لگانے کی ضرورت ہے۔ سی پی او ملتان کو چاہیے کہ کچہری میں سیکیورٹی عملہ کی کمی کو پورا کریں۔

مارچھے

مزید : ملتان صفحہ آخر