کاروباری سرگرمیاں بڑھانے کیلئے سٹیٹ بینک شرح سود میں فوری طور پر کمی کرے‘ میاں زاہد حسین

کاروباری سرگرمیاں بڑھانے کیلئے سٹیٹ بینک شرح سود میں فوری طور پر کمی کرے‘ ...

  



ملتان(نیوز رپورٹر)پاکستان بزنس مین اینڈ انٹلیکچولز فور م کے صدر اوربزنس مین پینل کے سینئر وائس چیئر مین میاں زاہد حسین نے (بقیہ نمبر32صفحہ12پر)

کہا ہے کہ اسٹیٹ بینک کاروباری افرادکے زخموں پر نمک چھڑکنا بند کرتے ہوئے شرح سود میں کمی کا اعلان کرے تاکہ عوام، تاجر اور صنعتکار سکھ کا سانس لے سکیں اورزوال پذیر پیداواری شعبہ فعال ہو سکے۔ شرح سود میں کمی سے کاروباری سرگرمیاں بڑھیں گی جس سے سرمایہ کاری، پیداوار اورروزگار کا بند دروازہ کھل جائے گا۔ میاں زاہد حسین نے کہا کہ ملکی معیشت کو سیاسی عدم استحکام، ضرورت سے زیادہ شرح سود، توانائی کی بڑھتی ہوئی قیمتوں، روپے کی ناقدری اور اشیائے خورد و نوش کی قیمتوں میں مسلسل اضافے نے یر غمال بنا رکھا ہے۔اشیائے خورد و نوش کی قیمتوں میں مسلسل اضافہ سے ملک میں غربت بڑھ رہی ہے اور عوام کی بڑی تعداد اپنی ا?مدنی کا 60 فیصد تک خوراک پر خرچ کرنے پر مجبور ہو گئی ہے۔خوراک کے بعد تعلیم صحت اور دیگر ضروریات کی باری ا?ئی ہے جو پوری نہیں ہو رہی تو عوام مارکیٹ سے کیا خریدے گی۔اسی وجہ سے طلب مسلسل کم ہو رہی ہے جس سے پیداوار مسلسل کم ہو رہی ہے۔ روپے کی قدرمیں ضرورت سے زیادہ کمی اور شرح سود میں اضافہ نے پیداواری لاگت میں اضافہ کر دیا ہے جبکہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بھی بڑھا دی ہیں اس وجہ سے نقل و حمل کے اخراجات بڑھ گئے ہیں جس کا سارا ملبہ عوام پر ڈالا جا رہا ہے جسکی کمر مہنگائی نے توڑ رکھی ہے۔بجلی اور گیس کی قیمتیں بھی مسلسل بڑھ رہی ہیں جبکہ پچھلے ڈیڑھ ماہ سے صنعتوں کو گیس کی فراہمی میں تعطل کا سا منا ہے

میاں زاہد حسین

مزید : ملتان صفحہ آخر