امریکی منصوبے کے خلاف کل جماعتی فلسطینی کانفرنس قاہرہ میں طلب

امریکی منصوبے کے خلاف کل جماعتی فلسطینی کانفرنس قاہرہ میں طلب

  



قاہرہ(این این آئی)اسلامی تحریک مزاحمت حماس کے سیاسی شعبے کے سربراہ اسماعیل ھنیہ نے امریکا کی طرف سے تیار کردہ نام نہاد امن منصوبے صدی کی ڈیل کے اعلان سے قبل تمام فلسطینی قوتوں کو مصر کے دارالحکومت قاہرہ میں جمع ہونے کے لیے طلب کیا ہے۔ تاکہ صدی کی ڈیل کے اعلان کے بعد آئندہ کیلیے لائحہ عمل طے کیا جا سکے۔مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق حماس کے سیاسی شعبے کے دفتر سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا کہ اسماعیل ھنیہ نے کہا کہ صدی کی ڈیل کا مقابلہ ہمارے لیے ایک جنگ ہے اور ہم اس جنگ میں کسی صورت میں پیچھے نہیں ہٹیں گے۔ اس جنگ میں پسپائی حرام ہے۔اسماعیل ھنیہ کا کہنا تھا کہ فلسطین ہمارا وطن، ہماری پاک سرزمین، پوری امت کا قیمتی ہیرا ہے جس پر نہ تو کوئی سمجھوتا کیا جاسکتا ہے اور نہ ہی اس کی خریدو فروخت کی جاسکتی ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم فوری طور پرتحریک فتح کی قیادت سے ملاقات کے لیے تیار ہیں۔

اس مقصد کے لیے تمام فلسطینی قوتوں سے اپیل کی گئی ہے کہ وہ قاہرہ پہنچیں تاکہ صدی کی ڈیل کی امریکی سازش کے خلاف آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جاسکے۔ ہمیں اپنے وطن، مقدسات اور محرمات کا خود ہی دفاع کرنا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ ہم دنیا، امریکا اور صہیونیوں کو بتا دینا چاہتیہیں کہ صدی کی ڈیل کو آگے بڑھنے نہیں دیا جائیگا۔ یہ امریکا کا نیا استعماری منصوبہ پاش پاش ہوگا اور اس میں فتح ونصرت فلسطینی قوم کی ہوگی۔

مزید : عالمی منظر