ایبٹ آباد گرینڈ ہیلتھ الائنس ہزارہ ڈویژن کا اجلاس،انتقامی کارروائی کی مذمت

    ایبٹ آباد گرینڈ ہیلتھ الائنس ہزارہ ڈویژن کا اجلاس،انتقامی کارروائی کی ...

  



ایبٹ آباد(ڈسٹرکٹ رپورٹر) ایبٹ آباد گرینڈ ہیلتھ الائنس ہزارہ ڈویژن کا اجلاس ایوب میڈیکل کمپلیکس میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں ایوب میڈیکل کمپلیکس ڈی ایچ کیو ایبٹ آباد،ضلع مانسہرہ،بٹگرام،ہریپور اور ڈویژن کی تمام ہیلتھ تنظیموں کے نمائندگان نے شرکت کی۔ اجلاس میں کمپلیکس BOG کی جانب سے انتقامی کاروائیوں پر شدید الفاظ میں مذمت کی گئی۔ اس بات پر شدید غم وغصہ کا اظہار کیا گیا کہ وزیر اعلی کی جانب سے واضح احکامات کے باوجود بورڈ آف گورنرز نے حکومت کے احکامات کو پس پشت ڈال کر اپنی نااہلی چھپانے کیلئے انتقامی کاروائیاں شروع کر رکھی ہیں۔اجلاس میں مطالبہ کیا گیا کہ فی الفور ڈاکٹر خیال آفریدی اور فریدون خان کے خلاف کارواء واپس لی جائے کیونکہ اس ضمن میں صلح نامہ ہو چکا تھا اور معاملہ عدالت میں بھی تھا لیکن اسکے باوجود ایک مخصوص طبقہ کے دباو پر بوگس انکوائری کے ذریعے دوبارہ انکے خلاف کاروائی کی گئی اجلاس کو بورڈ آف گورنرز کی جانب سے غیر قانونی بھرتیوں مالی خرد برد اور ہسپتال میں دواوں کی عزم فراہمی اور کروڑوں کی مشینری کے خراب ہونے پر بھی آگاہ کیا گیا بس پر بورڈ خاموش تماشاء بنا ہوا ہے۔چئرمین ڈاکٹر عاصم ہسپتال کے معاملات سے مکمل لاعلم رہتے ہیں اور انہیں ایک مخصوص طبقہ اپنی مرضی سے استعمال کر رہا ہیاجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ اگر فوری طور پر بورڈ آف گورنر نے اپنے فیصلے واپس نہ لئے اور BOG کو لگام نہ دی گئی تو گرینڈ ہیلتھ الائنس ہزارہ بھر کے ہسپتالوں میں احتجاج کرے گی اور اس ضمن میں اگلے چند روز میں کمپلیکس کے مقام پر ایک احتجاجی جلسہ منعقد کیا جائے گا اور شاہراہ ریشم کو بلاک کیا جائے گا۔اس ضمن میں ایک کمیٹی بھی تشکیل دی گء ہے جو معاملے کی حساسیت کے پیش نظر حکومتی اہلکاروں سے رابطہ کرے گی اور اگلے لائحہ عمل کی کال دے گی

مزید : پشاورصفحہ آخر