نوشہرہ میں بچی کا قتل وحشیانہ فعل ہے،امتیاز تنولی

  نوشہرہ میں بچی کا قتل وحشیانہ فعل ہے،امتیاز تنولی

  



پشاور(سٹی رپورٹر)پاک سر زمین پارٹی کے صوبائی صدر امتیاز اسد تنولی نے نوشہرہ میں معصوم بچی کو قتل کرنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ افسوس کیساتھ کہنا پڑتا ہے کہ ہمارے معاشرے میں ایسے کردار روزانہ رونما ہوتے ہیں جو انسان تو کیا جانور کہلانے کے بھی قابل نہیں انہوں نے کہا کہ جانور بھی معصوم اور چھوٹے جانوروں پر رحم کرتے ہیں لیکن کچھ وحشیوں نے معصوم بچوں کو اپنی ہوس کا نشانہ بنا کر انسانیت کی تذلیل کی ہے آج اگر ہم اس پیاری کلی عوض نور کے پرتشدد اور بہیمانہ قتل پر خاموش رہے تو کل کو اور معصوم کلیاں اس تشدد کا شکار ہوں گی۔ انہوں نے کہا کہ پور پاکستان اس حوالے سے عدم تحفظ کا شکار ہے لیکن جب کسی دوسرے صوبے میں ایسا ناخوشگوار واقعہ رونما ہوتا ہے تو حکومتی ادارے‘ عوامی نمائندے اور میڈیا حرکت میں آجاتے ہیں لیکن جب خیبرپختونخوا میں ایسا ہوتا ہے تو سب خاموش رہتے ہیں جس کی واضح مثال مانسہرہ‘ حویلیاں‘ مردان اور نوشہرہ کا حالیہ واقعہ ہے۔انہوں نے حکومت وقت سے مطالبہ کیا کہ واقعے میں ملوث افراد کو قرار واقعی سزا دی جائے تاکہ آئندہ کوئی ایسا گھناؤنا حرکت بھی نہ کرے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر