برطانیہ مقبوضہ وادی میں مظالم روکنے کے لئے ہندوستان کو مجبور کرے: وزیراعلٰی سندھ

برطانیہ مقبوضہ وادی میں مظالم روکنے کے لئے ہندوستان کو مجبور کرے: وزیراعلٰی ...

  



کراچی (این این آئی)وزیر اعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے برطانوی ہائی کمشنر کرسچن ٹرنر سے اپنی پہلی ملاقات میں مسئلہ کشمیر کو اٹھایا اور اس پر زور دیا کہ وہ مقبوضہ وادی کے عوام پر مظالم روکنے کے لئے ہندوستانی حکومت کو مجبور کرے۔ وزیراعلی سندھ نے کہا کہ ہندوستانی حکومت نے کشمیری عوام کے خلاف ریاستی دہشت گردی کو تقویت دی ہے اور مسلمانوں کے خلاف ان کی نفرت کا اندازہ ان کے سٹیزن (ترمیمی) بل 2019 سے لگایا جاسکتا ہے جسکے مطابق سوائے مسلمان کے تمام غیر ملکی انکو قبول تھے۔ انہوں نے کہا، اب، ہندوستانی حکام نے کشمیر میں نسل کشی شروع کردی ہے اور اسکی خصوصی حیثیت واپس لے کر مقبوضہ ریاست (کشمیر) کو اپنے ساتھ شامل کرلیا ہے جو اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے سراسر خلاف ورزی ہے۔ وزیراعلی سندھ نے اقوام متحدہ، عالمی برادری اور بین الاقوامی انسانی حقوق کے رکھوالوں پر زور دیا کہ وہ کشمیر کے مظلوم عوام کی آواز بنیں اور انہیں ہندوستانی ریاست کے چنگل اور نسل کشی سے آزاد کرائیں۔ اجلاس میں ڈپٹی برٹش ہائی کمشنر مسٹر مائک نیتھاویریاکس، وزیراعلی سندھ کے پرنسپل سکریٹری ساجد جمال ابڑو و دیگر نے شرکت کی۔ اجلاس میں انہوں نے تعلیم اور صحت کے شعبوں پر بھی تبادلہ خیال کیا جس میں برطانوی حکومت سرمایہ کاری کرنا چاہتی ہے۔ وزیراعلی سندھ نے کہا کہ اساتذہ کا تربیتی پروگرام، جدید ترین تدریسی طریقوں کو اپنانا اور درسی کتب کی بہتری وہ اہم شعبے ہیں جس برطانوی اور سندھ حکومت مل کر کام کرسکتی ہیں۔ دورہ کرنے والے برطانوی مندوب نے وزیر اعلی سندھ کو یقین دلایا کہ انکی حکومت تعلیم کے شعبے میں سندھ کی بھرپور حمایت کرے گی اور ہم صحت کے شعبے میں بھی سندھ حکومت کی حمایت کریں گے۔ وزیراعلی سندھ نے برطانوی ہائی کمشنر کو بتایا کہ برطانوی حکومت نے سکھر بیراج تعمیر کیا تھا، جو سنہ 1923 میں دنیا کا ایک خوبصورت اور بہترین بیراج تھا، اب اسے بڑے پیمانے پر مرمت اور تزئین و آرائش کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں خوشی ہوگی کہ برطانوی حکومت یا کوئی برطانوی نجی کمپنی بیراج کی بحالی میں سندھ حکومت کی مدد کرے۔ برطانوی ہائی کمشنر کرسچن ٹرنر نے وزیر اعلی سندھ کو یقین دلایا کہ وہ سکھر بیراج کے معاملے میں صوبائی حکومت کی حمایت کے لئے ہر ممکن کوشش کریں گے۔ دریں اثنا، مکنسی اینڈ کمپنی (Mckinesy & Company) کے مینیجنگ ڈائریکٹر مسٹر اوزگور تینرکولو (Ozgur Tanrikulu) کی سربراہی میں ایک وفد نے وزیر اعلی سندھ سید مراد علی شاہ سے ملاقات کی اور اساتذہ کی استعداد کار، درسی کتب کی بہتری اور اسپتال انتظامیہ کے عملے کی استعداد کار کی تعمیر میں مل کر کام کرنے پر اتفاق کیا۔ وزیر اعلی سندھ اور کمپنی نے مل کر کام کرنے پر اتفاق کیا جس کے لئے انہوں نے تعلیم اور صحت کے محکموں کو انکے ساتھ بیٹھ کر متعلقہ شعبوں میں اصلاحات کے نفاذ کے لئے ایک تفصیلی پروگرام تیار کرنے کی ہدایت کی۔ وزیر صحت ڈاکٹر عذرا فضل پیچوہو بھی اجلاس میں موجود تھیں اور انہوں نے اسپتال انتظامیہ کے عملے کی تربیت اور استعداد سازی کیلئے آنے والے وفد کے ساتھ ایک اور ملاقات بھی طے کی۔

وزیراعلیٰ سندھ

مزید : صفحہ آخر