ایف اے ٹی ایف میں پاکستان کو مزید 8 ممالک کی حمایت درکار

ایف اے ٹی ایف میں پاکستان کو مزید 8 ممالک کی حمایت درکار

  



اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)ایف اے ٹی ایف میں پاکستان کومزید8 ممالک کی حمایت حاصل کرناہوگی۔چین نے فنا نشنل ایکشن ٹاسک فورس میں پاکستان کی بھرپور حمایت کر دی جبکہ انڈ و نیشیا، ملائیشیا اور ترکی پہلے ہی پاکستان کی حمایت کر رہے ہیں۔ فروری میں پیرس میں ہونیوالے اجلاس تک پاکستان کو مزید8 ملکوں کی حمایت درکار ہوگی، ایک ذرائع کے مطابق ایف اے ٹی ایف میں پاکستان بہترین کارکردگی اور اہدا ف کو مکمل کرنے پر8 ممالک کی حمایت حاصل ہوگی،جبکہ انڈونیشیا، ملائیشیا اور ترکی اور دیگر ممالک پہلے ہی پاکستان کی حمایت کر رہے ہیں۔ واضح رہے پاکستان اورایف ایٹی ایف حکام کے درمیان بیجنگ میں تین روزہ مذاکرات بھی رواں ماہ ہوچکے ہیں۔ ایف ایٹی ایف ٹیم کی سر براہی چین کی ڈی جی فنانشل انویسٹی گیشن یونٹ کیسربراہ نے کی تھی۔اجلاس میں پیش کی گئی کارکردگی رپورٹ مجموعی طورپرپاکستان کے حق میں تھی،ایف اے ٹی ایف کا اس رپورٹ پرردعمل حوصلہ افزارہاجبکہ ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کی جانب سے منی لانڈرنگ اورٹیرر فنا نسنگ کیخلاف کیے گئے اقدامات پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔مذاکرات کے دوران پاکستا ن نے ایف اے ٹی ایف حکام کو گزشتہ ساڑھے چار ماہ کی پیش رفت سے آگاہ کیا گیا تھا۔جلاس کے بعد برطانیہ، سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات بھی پاکستان کی حمایت پر آمادہ ہوگئے ہیں جبکہ انڈونیشیا، ملائیشیا اور ترکی پہلے ہی پاکستان کی حمایت کر رہے ہیں۔

پاکستان حمایت

مزید : صفحہ اول