صوبائی کابینہ سے 3 وزرا فارغ لیکن دراصل وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کیخلاف بغاوت کرنیوالے کتنے افراد کا انکشاف ہوا؟ تہلکہ خیز خبرآگئی

صوبائی کابینہ سے 3 وزرا فارغ لیکن دراصل وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کیخلاف بغاوت ...
صوبائی کابینہ سے 3 وزرا فارغ لیکن دراصل وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کیخلاف بغاوت کرنیوالے کتنے افراد کا انکشاف ہوا؟ تہلکہ خیز خبرآگئی

  



پشاور( ویب ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف نے خیبر پختونخوا حکومت میں اختلافات، گروپ بندی اور وزیر اعلیٰ کیخلاف بغاوت کرنے والے 7ایم پی ایز کی نشاندہی کرتے ہوئے انہیں شوکاز نوٹس بھجوانے کا فیصلہ کرلیا ہے جن میں خواتین ارکان بھی شامل ہیں۔ روزنامہ جنگ کے مطابق برطرف وزرا عاطف خان اور شہرام ترکئی نے پارٹی فیصلہ پر خاموشی توڑتے ہوئے وزیر اعظم سے ملاقات کیلئے اسلام آباد میں ڈیرہ جمالئے ہیں اور کہا ہے کہ وزیر اعظم کو کہانی کا ایک رخ دکھایا گیا۔

وزیراعلیٰ کی مخالفت نہیں کی جبکہ وزیر اعلیٰ محمود خان نے پیر کی شام وزیر اعلیٰ ہاﺅس میں پارٹی ایم پی ایز کے اعزاز میں عشائیہ دیا تاہم برطرف وزرا اور باغی ارکان کو شرکت کی دعوت نہیں دی گئی۔وزیر اعظم عمران خان کی ہدایت پر خیبر پختونخوا حکومت نے اتوار کے روز اختلافات، گروپ بندی اور وزیر اعلیٰ محمود خان کیخلاف بغاوت پر 3اہم ترین وزرا کو فارغ کرکے گھر بھیج دیا تھا۔

برطرف وزرا میں صوبہ کی وزارت اعلیٰ کے سابق مضبوط امیدوار سینئر وزیر عاطف خان، وزیر صحت شہرام ترکئی اور وزیر مال شکیل احمد خان شامل ہیں۔ صوبائی وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی نے تصدیق کرتے بتایا ہے کہ گروپ بندی اوروزیر اعلیٰ کیخلاف بغاوت میں ملوث پارٹی کے7ارکان اسمبلی کی نشاندہی کرلی گئی ہے۔

مزید : علاقائی /خیبرپختون خواہ /پشاور