گورنرسٹیٹ بینک نے آئندہ 2 ماہ کیلئے مانیٹری پالیسی کا اعلان کردیا

گورنرسٹیٹ بینک نے آئندہ 2 ماہ کیلئے مانیٹری پالیسی کا اعلان کردیا
گورنرسٹیٹ بینک نے آئندہ 2 ماہ کیلئے مانیٹری پالیسی کا اعلان کردیا

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) گورنرسٹیٹ بینک رضا باقرنے آئندہ 2 ماہ کیلئے مانیٹری پالیسی کا اعلان کردیا، انہوں نے کہا ہے کہ شرح سود برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے ، برآمدی شعبے کےلئے قرضوں کی حد 200 ارب روپے کی جارہی ہے۔

گورنر سٹیٹ بینک رضا باقر نے مانیٹری پالیسی کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ سٹیٹ بینک نے شرح سود کو 13 اعشاریہ 25 فیصدپر برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے، رواں سال زرعی پیداوارہدف سے کم ہونے کا خدشہ ہے،جولائی سے اب تک مہنگائی میں مسلسل اضافہ ہوا، رواں سال مہنگائی کی شرح 11سے12 فیصد رہے گی، سپلائی بہتر ہونے سے مہنگائی کی شرح میں کمی آنے کی توقع ہے۔

انہوں نے کہا کہ معاشی استحکام میں مزیدبہتری آرہی ہے،ایکسپورٹ کے شعبے اچھا پرفارم کر رہے ہیں،خدمات اور انڈسٹری کے شعبے میں بہتری کے آثار نظر آ رہے ہیں،مقامی مارکیٹ میں سیمنٹ کی فروخت بڑھ رہی ہے،ٹیکسٹائل سیکٹر کی جانب سے اچھے اشاریے سامنے آئے ہیں۔

گورنر سٹیٹ بینک کے مطابق ایکسپورٹرزکی حوصلہ افزائی مرکزی بینک کی ترجیح ہے،روایتی کی بجائے تمام مصنوعات کی برآمد کیلئے اقدامات کر رہے ہیں،برآمدی شعبے کےلئے قرضوں کی حد 200 ارب روپے کی جارہی ہے،ورکنگ کیپیٹل سکیم میں بھی 100 ارب کا اضافہ کیا جا رہا ہے،چھوٹے ایکسپورٹرز کےلئے بھی پالیسی لا رہے ہیں،شرح مبادلہ کے نظام میں اصلاحات کرکے پائیدار نظام وضع کیا گیا ہے۔

مزید : اہم خبریں /قومی /بزنس