تحریک انصاف کی حکومت میں ہر شعبے میں تنزلی کے ریکارڈ بن گئے: سینیٹر پروفیسر ساجدمیر

تحریک انصاف کی حکومت میں ہر شعبے میں تنزلی کے ریکارڈ بن گئے: سینیٹر پروفیسر ...
تحریک انصاف کی حکومت میں ہر شعبے میں تنزلی کے ریکارڈ بن گئے: سینیٹر پروفیسر ساجدمیر

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن)  مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے سربراہ سینیٹر پروفیسر ساجدمیر نے کہا ہے کہ   پاکستان تحریک انصاف ( پی ٹی آئی)  کی حکومت میں ہر شعبے میں تنزلی کے ریکارڈقائم ہوئے، عوام کی جیبیں خالی کرانے والےمافیانے دیدہ دلیری سے پاکستان پر ہاتھ صاف کیے۔

جامعہ ابراہیمیہ میں جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے پروفیسر ساجد میرکاکہنا تھا کہ موجودہ  دور میں غربت‘ مہنگائی، بے روزگاری کے مسائل نہ صرف مزید گھمبیر ہو گئے بلکہ کرپشن میں بھی اضافہ ہوا جس کا ثبوت ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کی کرپشن پر سال 2021ء کی رپورٹ ہے جس میں کہا گیا ہے کہ پاکستان میں کرپشن میں اضافہ ہوا ہے۔ 2018ء میں پاکستان کا کرپشن انڈکس میں 117 واں نمبر تھا۔ 2019ء میں 120‘ 2020ء میں 124واں نمبر تھا اور اب 2022ء میں پاکستان عالمی درجہ بندی میں 140ویں نمبر پر آگیا ہے۔

 انہوں نے کہا کہ اس سے قبل پنڈورا پیپرز میں 700 سے زیادہ پاکستانی شخصیات کے نام بھی شامل تھے جن میں سابق وفاقی و صوبائی وزراء کے علاوہ موجودہ حکومت کے وزراء اور بیوروکریٹس بھی شامل تھے۔ ان رپورٹس کی روشنی میں قوم وزیراعظم کے اس بیان پر کیسے یقین کر سکتی ہے کہ انہوں نے پہلے 90 روز میں کرپشن کا خاتمہ کر دیا تھا۔ ان چشم کشا رپورٹس کے منظر عام پر آنے کے باوجود حکومت کی جانب سے کرپشن پر قابو پانے کیلئے کوئی خاطرخواہ اقدامات نہیں کئے گئے،  حقیقت یہ ہے کہ موجودہ حکومت کے گزشتہ ساڑھے تین سال میں عوام کو صرف مایوسی کا ہی سامنا رہا ہے، حکومتی دعوؤں کے باوجود لاقانونیت‘ مافیاز کی اجارہ داری اور کرپشن نے آج بھی ملک بھر میں اپنے بے رحم پنجے گاڑے ہوئے ہیں۔ مہنگائی کا عفریت ہرسو پھیلا ہے جس نے غریب عوام کا سانس لینا دوبھر کردیاہے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -