مریم نواز ابوظہبی سے لاہور پہنچ گئیں

 مریم نواز ابوظہبی سے لاہور پہنچ گئیں
 مریم نواز ابوظہبی سے لاہور پہنچ گئیں

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)مسلم لیگ ن کی نائب صدر و چیف آرگنائزر مریم نواز ابوظہبی سے لاہور پہنچ گئیں،مریم نواز پی آئی اے کی پرواز پی کے 264 سے لاہور پہنچیں۔

چیف آرگنائزر مسلم لیگ ن مریم نواز نے پاکستان پہنچتے ہی ٹوئٹ کردی جس کے کیپشن میں انہوں نے ”پاک سرزمین شاد باد“تحریرکیا۔

کیپٹن(ر)صفدر مریم نواز کے استقبال کیلئے لاہور ایئرپورٹ پہنچ گئے،خواجہ سعد رفیق ، جاوید لطیف ودیگر ممبران اسمبلی بھی ایئرپورٹ پہنچ گئے،خرم دستگیر اور طلال چودھری بھی اپنی قائد کے استقبال کیلئے پہنچ گئے۔

لاہور ایئرپورٹ رن وے اور پسنجر لاﺅنج میں سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں،مریم نواز کو سکیورٹی حصار میں مسافر لاﺅنج سے باہر لایا جائے گا،غیرمعمولی حرکات و سکنات والے مشکوک افراد پر کڑی نظر رکھی جائے گی،اے ایس ایف حکام کو سکیورٹی کے خصوصی احکامات دیئے گئے ہیں،ایئرپورٹ کے کنکورس ہال کے سامنے عام گاڑیوں کی پارکنگ بندکر دی گئی ۔

مسلم لیگ( ن) کی چیف آرگنائزر مریم نواز کے استقبال کےلئے لاہور ایئرپورٹ کی حدود میں استقبالیہ کیمپ لگ گیا ایئرپورٹ کے راستوں پر بینرز آویزاں کر دیئے گئے،مریم نواز کے لئے کنٹینر بھی تیار کر لیا گیا مریم نواز کنٹینر سے کارکنوں سے خطاب کریں گی ساؤنڈ سسٹم اور لائٹنگ کا بھی انتظام کیا گیا ہے ایئرپورٹ پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں استقبالیہ سے باہر واک تھرو گیٹس نصب کر دیئے گئے کارکنان واک تھرو گیٹس سے گزر کر ہی استقبالیہ کی طرف جا سکیں گے۔

 مریم نواز نے لندن میں ساڑھے تین ماہ اپنے والد نواز شریف کے ساتھ سیاسی مشاورت اور تنظیم سازی پر کام کیا اور اب وہ ایک بار پھر ملکی سیاسی محاذ پر ہلچل مچانے کیلئے تیار ہیں، مریم نواز نے 2011میں سیاسی میدان میں قدم رکھا ،7 سال سیاسی اتار چڑھاؤ دیکھے اور 13 جولائی 2018کو پہلی مرتبہ انہیں ایون فیلڈ کیس میں والد کے ہمراہ اڈیالہ جیل میں سزا کاٹنا پڑی، عمران خان کے دور حکومت میں مریم نواز نے نیب حراست اور ایون فیلڈ کیس میں 158روز جیل میں گزارے۔

4سال میں مریم نواز نے جیل و بند کی صعوبتیں برداشت کیں لیکن اس کے باوجود انہوں نے عمران حکومت میں بہادری سے اپنی سیاسی جدوجہد جاری رکھی اور اس دوران اپنے والد نواز شریف کی رہائی کے لئے بھی مہم چلائی ،مریم نواز کو ایون فیلڈ کیسز میں سزا کالعدم ہونے پرنیب ریفرنس میں انکا ضبط پاسپورٹ لاہور ہائیکورٹ سے اکتوبر 2022میں واپس ملا جس کے بعد وہ اپنے والد کے پاس لندن چلی گئیں۔جہاں چیف آرگنائزر اور سینئرنائب صدر کے عہدے ملنے کے بعد وہ آج لاہور ائیرپورٹ پہنچ رہی ہیں جہاں ان کے استقبال اور جلسے کا اہتمام کیا گیا ہے۔