پارہ چنار، این اے45میں مبینہ دھاندلی کے خلاف پی ٹی آئی کا احتجاجی دھرنا

پارہ چنار، این اے45میں مبینہ دھاندلی کے خلاف پی ٹی آئی کا احتجاجی دھرنا

پارا چنار(بیورورپورٹ)ضلع کرم کے علاقہ صدہ میں پی ٹی آئی کے مظاہرین منتشر کرنے کیلئے ایف سی نے ہوائی فائرنگ کی پی ٹی آئی کے کارکن این اے 45 میں مبینہ دھاندلی کے احتجاجی دھرنا دے رہے تھے حلقہ این اے 45 ضلع کرم میں مبینہ دھاندلی کے خلاف پی ٹی آئی کے کارکنوں نے این اے 45 امیدوار سید جمال نے جے یو آئی کے خلاف صدہ میں احتجاجی دھرنا دے رہے تھے اور جے یو آئی کے کارکنوں کی جانب سے دھاندلی کے خلاف نعرہ بازی کررہے تھے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے ایف سی اہلکاروں نے ہوئی فائرنگ کی اور آنسو گیس کے گولے فائر کئے جسے دو صحافیوں سمیت متعدد مظاہرین بے ہوش ھوگئے تا ہم فائرنگ اور آنسو گیس کی شیلنگ کے باوجود مظاہرین کا دھرنا جاری ہے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے حلقہ این 45 سے پی ٹی آئی کے امیدوارحاجی سید جمال نے کہا کہ جے یو آئی کے امیدوار منیر خان اورکزئی نے دھاندلی کے زریعے زیادہ ووٹ لئے ہیں اور مخالفین کے ووٹروں کو ووٹ ڈالنے نہیں دیا گیا اور اس کے کارکن مخالف ووٹرز کو پولنگ اسٹیشنوں سے نکالتے رہے یہاں تک کہ پولنک ایجنٹوں کو بھی اسٹیشنوں سے نکال دیا گیا اس لئے انہیں اس حلقے کے نتائج کسی صورت قبول نہیں سید جمال نے مطالبہ کیا کہ این اے 45 میں دوبارہ انتخابات کرائے جائیں دھرنے سے سید جمال کے خواتین پولنگ ایجنٹوں نے بھی خطاب کیا اور پولنگ کے روز ہونے والے دھاندلی کے حوالے سے تفصیلات بیان کئے پی پی پی کے امیدوار ڈاکٹر عارف حسین نے بھی مبینہ دھاندلی کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے حلقے کے نتائج کو تسلیم نہ کرنے اور دوبارہ انتخابات کرانے کا مطالبہ کیا ہے

مزید : کراچی صفحہ اول