کراچی ،(ن لیگ کا این اے 245میں دوبارہ پولنگ کا مطالبہ

کراچی ،(ن لیگ کا این اے 245میں دوبارہ پولنگ کا مطالبہ

کراچی(اسٹاف رپورٹر)پاکستان مسلم لیگ (ن) سندھ کے سیکرٹری اطلاعات اور این اے 245کے امیدوارخواجہ طارق نذیر الیکشن کمیشن آف پاکستان سے حلقے میں دوبارہ پولنگ کرانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہاہے کہ ان کے حلقے میں الیکشن قواعد کی خلاف ورزی ،پولنگ ایجنٹس کو ہراساں کرنے اور من پسند جماعتوں کے پولنگ ایجنٹس کو فری ہینڈ دینے کی تحقیقات کرائی جائیں ۔پولنگ کے عملے کی جانبداری نے الیکشن کے عمل کو مشکوک بنادیا ہے ۔ الیکشن کمیشن آف پاکستان کو ارسال کیے گئے مراسلے میں خواجہ طارق نذیر نے کہا کہ حلقہ این اے 245میں ان کے پولنگ ایجنٹس کو بوتھ میں داخل ہونے سے روکا گیا اور صبح ساڑھے دس بجے کے بعد ان کے ایجنٹس کو اندر جانے کی اجازت دی گئی ۔بیلٹ بکس کو ہمارے پولنگ ایجنٹس کی عدم موجود گی میں سیل کیا گیا جو کہ الیکشن رولز کی صریحاً خلاف ورزی ہے ۔انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کے ووٹرز کو تقریباً ہر پولنگ اسٹیشن پر پریشان کیا گیا اور ان سے کہا جاتا رہا ہے کہ ان کا ووٹ اس پولنگ اسٹیشن پر رجسٹرڈ نہیں ہے جبکہ اکثر ووٹرز کا ووٹ اس ہی پولنگ اسٹیشن پر رجسٹرڈ تھا جہاں پر وہ کاسٹ کرنے گئے تھے ۔خواجہ طارق نذیر نے کہا کہ شام 6بجے پریذائیڈنگ افسران اور پولنگ اسٹاف سمیت سکیورٹی کے عملے نے ہمارے پولنگ ایجنٹس کو باہر نکال گنتی کا عمل شروع کردیا ۔پولنگ ایجنٹس کی غیر موجودی میں ووٹوں کی گنتی کا عمل الیکشن قوانین کی خلاف ورزی ہے ۔اس عمل سے الیکشن کمیشن کے شفاف انتخابات کرانے کے دعوؤں پر شکوک و شبہات کے سائے چھاگئے ہیں ۔خواجہ طارق نذیر نے کہا کہ پریذائیڈنگ افسران کی جانب سے پولنگ ایجنٹس کو فارم 45پر رزلٹ فراہم نہیں کیا جس سے انتخابی نتائج مشکوک ہوگئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ان تمام شکایات سے تمام متعلقہ حکام کو زبانی اور تحریری طور پر آگاہ کیا گیا لیکن اس پر خصوصاً پریذائیڈنگ افسران اور پولنگ کے عملے کی جانب سے کوئی ایکشن نہیں لیا گیا ۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ ان تمام شکایات کا جائزہ لیا جائے انتخابی عمل کی شفافیت کو برقرار رکھنے کے لیے قواعد کی خلاف ورزی میں ملوث پولنگ کے عملے کے خلاف کارروائی کی جائے اورحلقہ این اے 245میں دوبارہ الیکشن کرائیں جائیں۔

مزید : کراچی صفحہ اول