ہیپاٹائٹس کیخلاف عالمی دن آج منایا جائیگا

ہیپاٹائٹس کیخلاف عالمی دن آج منایا جائیگا

ملتان (وقائع نگار) ہپاٹائٹس کیخلاف عالمی دن آج 28جولائی(ہفتہ) کومنایا جائیگا، اس مرض کے حوالے سے آگہی پیداکرنے (بقیہ نمبر40صفحہ12پر )

کیلئے تقریبات ہوں گی۔ ہیپاٹائتس کے مریضوں کی تعدادمیں روز بروزاضافہ ہورہاہے،عالمی ادارہ صحت کے مطابق دنیا میں 50کروڑسے زائد جبکہ پاکستان میں 2کروڑ افراد ہیپاٹائٹس کے مرض میں مبتلا ہیں، دنیا میں ہرسال 17لاکھ افراداس مرض کی وجہ سے فوت ہوجاتے ہیں، اسے خاموش قاتل بھی کہا جاتا ہے بیشتر مریضوں کو آخری اسٹیج پر مرض کا پتہ چلتاہیایک تحقیق کے مطابق دنیا کا ہر 10واں شخص ہیپاٹائٹس میں مبتلا ہے جبکہ پاکستان میں جگر کا یہ مرض بیماریوں میں تیسرے نمبر پرآچکا ہے جو بگڑ کر کینسر میں تبدیل ہوجاتا ہے،ہیپاٹائٹس کی مختلف اقسام ہیں جن میں اے اور بی غیر تسلی بخش کھانوں، آلودہ پانی سے پھیلتے ہے،ہیپاٹائٹس بی اورسی وائرس سے پھیلتا ہے، ہیپاٹائٹس بی سے بچاؤ کی ویکسین موجود ہے،ہیپاٹائٹس سی سے بچنے کے لئیویکسین تو موجود نہیں مگرمریض کے جگراور مختلف تشخصی ٹسٹوں کی بنیادپر ادویاتکیذریعیہپیاٹائٹس سی کا علاج ممکن ہیہیپاٹائٹس جگرکی سوزش کو کہتے ہیں مرض کی علامات میں تھکاوٹ محسوس کرنا، بھوک ختم ہونا، معدے میں درد، نظام انہظام درست نہ رہنا،بخاررہنا،دست وقے لگنا،جلد اور آنکھوں میں پیلا ہٹ کرنا اترنا شامل ہیں، ملتان سمیت ملک بھر کے بیشتر سرکاری ہسپتالوں میں ہیپاٹائٹس کی تشخیص کے لئے پی سی آر ٹیسٹ کی کٹس کی عدم دستیابی رہتی ہیجبکہ حکومتی سطح پر ہیپاٹائٹس بی اور سی کے مریضوں کو مفت علاج کے لئے ادویات کے حصول میں بھی مشکلات کا سامنا رہتا ہے۔

عالمی دن

مزید : ملتان صفحہ آخر