نوشہرہ میں دریائے کابل کے کنارے سے 12 سالہ لڑکے کی لاش برآمد، بدفعلی کی کوشش کاانکشاف، جیب سے ملی پرچی پر کیا لکھا تھا؟ جان کر کسی کی بھی آنکھیں نم ہوجائیں کیونکہ ۔ ۔ ۔

نوشہرہ میں دریائے کابل کے کنارے سے 12 سالہ لڑکے کی لاش برآمد، بدفعلی کی کوشش ...
نوشہرہ میں دریائے کابل کے کنارے سے 12 سالہ لڑکے کی لاش برآمد، بدفعلی کی کوشش کاانکشاف، جیب سے ملی پرچی پر کیا لکھا تھا؟ جان کر کسی کی بھی آنکھیں نم ہوجائیں کیونکہ ۔ ۔ ۔

  

نوشہرہ (ویب ڈیسک) نوشہرہ مردان پل کے قریب دریائے کابل کے کنارے پر بارہ سالہ لڑکے کومبینہ طور پر زیادتی کے بعد نامعلوم ملزمان نے پھانسی دیکر قتل کردیا۔ بچے کی شناخت نہ ہوسکی پولیس نے لاش لاوارث قراردیکر امانتا دفنا دی۔ نوشہرہ کینٹ پولیس نے نامعلوم ملزم یاملزمان کے خلاف قتل کامقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کردی۔

روزنامہ جنگ کے مطابق اے ایس ائی اول خان نے نوشہرہ کینٹ پولیس کورپورٹ درج کراتے ہوئے کہا کہ اس کو اطلاع ملی کہ نوشہرہ مردان پل دریائےکابل کے نیچے ایک بارہ سالہ لڑکے کی لاش پڑی ہے چنانچہ اس کی لاش ہسپتال منتقل کردی گئی۔ لڑکے نے سندھی ٹوپی، کریم کلر کپڑے، پلاسٹک چپل پہنے ہوئے تھا اوراس کی عمر بارہ تیرا سال، رنگ گندمی ہے۔ لڑکے کی جیب سے رضا اللہ پی کے 67 کی پرچی بھی ملی ہے جس کو مبینہ طور پرنامعلوم ملزم یاملزمان نے زیادتی کے بعد پھانسی دیکر قتل کیا  اوراس کی لاش دریائے میں بہادی مگر پانی نے واپس اس بچے کی لاش کنارے پر کردی۔

ملزمان نے لڑکے کے ساتھ زیادتی کی بھی کوشش کی۔ نوشہرہ کینٹ پولیس نے نامعلوم ملزم یا ملزمان کے خلاف قتل کامقدمہ درج کرکے لاش ا مانتا دفنا دی۔ 

 

مزید : جرم و انصاف