ٹانک،مکین اڈہ مارکیٹ میں قبضہ مافیاکی خلوت اور برآمتہ کے نام پر بھتہ خوری 

ٹانک،مکین اڈہ مارکیٹ میں قبضہ مافیاکی خلوت اور برآمتہ کے نام پر بھتہ خوری 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


ٹانک(نمائندہ خصوصی)مکین اڈہ مارکیٹ میں قبضہ مافیاکا خلوت اور برآمتہ کے نام پر بھتہ خوری کا سلسلہ جاری ایک مفاد پرست گروہ نے اپنے ذاتی مفاد کی تکمیل کے لئے مکین کمرشل مارکیٹ کو لڑائی اور جھگڑوں کا مسکن بنا لیا اعلی حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ تفصیلات کے مطابق جنوبی وزیرستان کی تحصیل مکین جو آبادی کے لحاظ سے گنجان آباد علاقہ تصور کیا جاتا ہے لیکن یہاں پرگزشتہ عرصہ سے مکین کمرشل مارکیٹ میں ایک مفاد پرست ٹولہ نے مذکورہ مارکیٹ میں اپنے دفاترقائم کر کے سازشوں کے ذریعے چھوٹے مسائل کو بڑا بنا کر مقامی لوگوں کو آپس میں لڑانے میں مصروف عمل ہیں اور بعد میں لوگوں سے خلوت اور برآمتہ کے نام پر لاکھوں روپے بٹور کر کاروبار بنایا ہوا ہے اس کے علاوہ ایک لینڈ قبضہ مافیا گروپ بھی سرگرم عمل ہے جو وہاں کے مقامی لوگوں کی جائیدادوں کو بلڈوز کر کے ان پر ناجائز قبضہ کر رہے ہیں جس کی وجہ سے علاقہ میں دھنگے فساد اور لڑائی جھگڑے روزانہ کا معمول بن چکے ہیں اور کاروبار زندگی بری متاثر ہو رہا ہے قبائلی رہنماء ملک اے ڈی خان محسود نے میڈیا کو بتاتے ہوئے کہا ہے کہ مکین کمرشل مارکیٹ اور اس کے ساتھ ملحقہ علاقوں میں انتظامیہ کی این او سی کے بغیر بلڈوزر اور ٹریکٹرکے چلانے پر پابندی لگائی جائے تاکہ علاقہ کے مقامی لوگوں کی جائیداوں پر ہونے والے ناجائز قبضہ کا تدارک کیا جا سکے انہوں نے آئی جی پولیس خیبر پختون خواہ سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ مذکورہ حالات کے پیش نظر مکین کمرشل مارکیٹ میں پولیس چوکی کا قیام عمل میں لایا جائے تاکہ امن و امان کی فضا کو برقرار رکھا جا سکے اور قانون شکنی کرنے والے عناصر کے خلاف فوری کاروائی عمل میں لائی جائے تاکہ پاک فوج اور مقامی لوگوں کی امن بحالی کے لئے دی جانیوالی قربانیاں رائیگاں نہ ہوں اور 2002 سے پہلے والے حالات جنم نہ لے سکیں انہوں نے کہا کہ پولیس کے اعلی حکام اور صوبائی حکومت پولیس کے نظام کو مضبوط بنانے کے لئے تمام تر سہولیات کی فراہم کو یقینی بنائیں تاکہ فاٹا میں پولیس اصلاحات کے حوالے سے کئے جانیوالے اقدامات کامیابی کے ساتھ ہمکنار ہو سکیں