پروفیسر عنایت علی خان مرحوم

پروفیسر عنایت علی خان مرحوم

  

طنزو مزاح کے نامور اور مقبول شاعر پروفیسر عنایت علی خان کراچی میں انتقال کر گئے۔ ان کی عمر 85 برس تھی اور وہ گزشتہ کئی ماہ سے بستر علالت پر تھے۔ پروفیسر صاحب 1935ء میں ایک بھارتی ریاست میں پیدا ہوئے، تیرہ برس کی عمر میں ہجرت کرکے پاکستان پہنچے۔1946ء میں حیدرآباد میں سکونت اختیار کر لی۔1962ء میں سندھ یونیورسٹی سے ایم اے کے امتحان میں اول پوزیشن حاصل کی ان کی شاعری کے کئی مجموعے شائع ہو چکے ہیں جن میں ازراہ عنایت، عنایات اور عنایتیں کیا کیا شامل ہیں۔ بچوں کے لئے نظمیں بھی کہیں، ”بول میری مچھلی کتنا پانی“ ان کی ایسی نظم ہے، جو بچے بچے کی زبان پر رہی اور بڑے بھی اس سے لطف اٹھاتے ہیں۔ پروفیسر عنایت علی خان جس مشاعرے میں شریک ہوتے، اسے لوٹ لیتے۔ لوگ انہیں سنتے چلے جاتے۔ وہ ہماری قومی تہذیب کے نمائندے تھے۔ اللہ تعالیٰ مغفرت فرمائے کہ ان کا خلاء پُر کرنے والا کوئی نظر نہیں آ رہا۔

مزید :

رائے -اداریہ -