پی ایم اے کا حکومت سی ایس او پیز پر سختی ست عملدرآمد کرنے کا مطالبہ

  پی ایم اے کا حکومت سی ایس او پیز پر سختی ست عملدرآمد کرنے کا مطالبہ

  

لاہور(جنرل رپورٹر)پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے ایس اوپیز پر سختی سے عمل درآمد کروایا جائے۔ یہ بات مشاہدے میں آئی ہے کہ ہر جگہ مقامی انتظامیہ مویشی منڈیوں میں ایس او پیز کو لاگو کرنے میں لاپرواہی کا مظاہرہ کر رہی ہے۔ جانور بیچنے والے اور خریدنے والے بغیر ماسک کے منڈیوں میں موجود ہیں بچوں اور بوڑھوں کے منڈی جانے پر کوئی پابندی نظر نہیں آتی اور نہ ہی ان منڈیوں کے داخلی راستوں پر کسی کا بخار چیک ہوتا ہے یہ صورتحال بہت تشویش ناک ہے۔اس سلسلے میں ہم اسلام آباد کی انتظامیہ کی کاوشوں کو سراہتے ہیں وہ مویشی منڈیوں میں ایس او پیز پر عمل درآمد کروارہے ہیں۔ اسلام آباد کی طرح ملک بھر کی مویشی منڈیوں میں ایس او پیز کو سختی سے نافذ کریں۔ اگر ایس او پیز پر عمل درآمد نہ ہوا تو آئندہ آنے والے تہواروں، عیدالاضحی، یوم آزادی، محرم اور ربیع الاول کے دوران کووڈ۔۱۹ کی صورتحال ابتر ہو سکتی ہے۔ کووڈ۔۱۹ کی شدت پر نظر رکھتے ہوئے تعلیمی ادارے کھولنے کا فیصلہ کیا جائے۔ سکول کھولنے سے پہلے تمام اسٹاف، وین ڈرائیور اور وین کنڈیکٹر کے کرونا ٹیسٹ کیے جائیں کیونکہ کرونا وائرس سے متاثرہ ایک شخص بھی پورے ادارے کو متاثر کر سکتا ہے۔عوام سے بھی درخواست کرتے ہیں کہ وہ احتیاطی تدابیر کو اپنائیں،سماجی فاصلہ برقرار رکھیں، ماسک پہنیں اور مسلسل ہاتھوں کو دھوئیں یا سینی ٹائز کریں۔

پی ایم اے

مزید :

صفحہ آخر -