سپریم کورٹ نے اڈیالہ جیل میں ویڈیو لنک سہولت نہ ہونے کا نوٹس لے لیا

سپریم کورٹ نے اڈیالہ جیل میں ویڈیو لنک سہولت نہ ہونے کا نوٹس لے لیا
سپریم کورٹ نے اڈیالہ جیل میں ویڈیو لنک سہولت نہ ہونے کا نوٹس لے لیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ نے اڈیالہ جیل میں ویڈیو لنک سہولت نہ ہونے کا نوٹس لے لیا،اٹارنی جنرل ،ایڈووکیٹ جنرل پنجاب اور اسلام آباد کونوٹس جاری کرتے ہوئے عدالت نے کہاکہ بتایا جائے ویڈیو لنک ٹرائل کے حوالے سے حکومت کی کیا پالیسی ہے؟، عدالت نے نوٹس سیکرٹری یونین کونسل روات کی ضمانت کے مقدمہ میں جاری کیا۔

عدالت نے کہاکہ ٹیکنالوجی کے دور میں ویڈیو لنک سہولت فراہم کرنا مشکل نہیں ،وکیل ملزم شاہ خاور نے کہاکہ ٹرائل میں پیشرفت نہیں ہو رہی ،نیب پراسیکیوٹر نے کہاکہ اڈیالہ جیل میں ویڈیو لنک کی سہولت دستیاب نہیں ،آئی جیل خانہ جات اورحکومت کو خط لکھے لیکن پیشرفت نہیں ہوئی ،آصف زرداری سمیت کئی کیسز میں ویڈیو لنک پرٹرائل شروع ہو چکا۔

وکیل ملزم شاہ خاور نے کہاکہ ملزم جاوید اخترچودھری کو ضمانت دے دیں ،جسٹس مشیر عالم نے کہاکہ ملزم کی وجہ سے لوگوں کابھلا ہو جائے گا، ضمانت دیکر کیس ختم کردیاتو ویڈیو لنک والا معاملہ دب جائے گا،عدالت نے کیس کی سماعت غیر معینہ مدت تک ملتوی کردی ۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -