سید خورشید شاہ کے لئے الگ قانون کیوں؟ شیری رحمن

سید خورشید شاہ کے لئے الگ قانون کیوں؟ شیری رحمن

  

 اسلام آباد (این این آئی)نائب صدر پیپلز پارٹی سینیٹر شیری رحمان نے کہا ہے کہ سندھ ہائی کورٹ نے خورشید شاہ کی درخواست ضمانت مسترد کر دی، خورشید شاہ کے ساتھ یہ زیادتی کیوں؟۔ اپنے بیان میں شیری رحمن نے کہاکہ ٹرائل کورٹ کو جلد فیصلہ کرنے کا حکم دیا گیا اب سوال یہ ہے کہ خورشید شاہ کے ساتھ یہ زیادتی کیوں؟ ضمانت کا حق تو سب کو ہے انہوں نے کہاکہ سید خورشید شاہ کیلئے الگ قانون کیوں؟ دوسری جانب الیکشن کمیشن کے دو ممبران اپنی مدت پوری کرنے کے بعد پنجاب اور کے پی کے سے ریٹائر ہوگئے آئین کے مطابق وزیراعظم کو اپوزیشن رہنماؤں کی مشاورت سے 45 دنوں کے اندر تقرریوں کو حتمی شکل دینی چاہئے اپنے بیان میں شیری رحمان نے کہاکہ پی ٹی آئی حکومت 1 سال تک سندھ اور بلوچستان سے کسی بھی ممبر کو مقرر کرنے میں ناکام رہی، شیری رحمان نے کہاکہ ماضی میں پی ٹی آئی حکومت نے کمشنرز کی تقرری پر آئینی طریقہ کار کو بھی نظرانداز کیا، جمہوریت میں کلیدی آئینی اداروں میں تقرریاں اسی وقت ہوتی ہیں جب حکومت حزب اختلاف کے ساتھ اتفاق رائے پیدا کرے یہاں وزیراعظم قومی معاملات پر اپوزیشن کے ساتھ نہیں بیٹھتے۔

شیری رحمن

مزید :

صفحہ آخر -