وہاڑی: مخبری شبہ پرنوجوان قتل، ورثا کا احتجاجی مظاہرہ، دھرنا، نعرے بازی

 وہاڑی: مخبری شبہ پرنوجوان قتل، ورثا کا احتجاجی مظاہرہ، دھرنا، نعرے بازی

  

 وہاڑی(بیورورپورٹ،نمائندہ خصوصی) مخبری کے شبہ میں جرائم پیشہ افراد کی فائرنگ سے جاں بحق ہونے والے نوجوان کے ورثاء نے ڈی پی او آفس کے سامنے احتجاج کیا، تفصیل کے مطابق نواحی گاؤں 19 ڈبلیو بی کے رہائشی نوجوان محمد عادل کو دو روز قبل 23 ڈبلیو بی(بقیہ نمبر34صفحہ6پر)

 میں مبینہ منشیات فروشوں اور جرائم پیشہ افراد نے مخبری کے شبہ میں فائرنگ کر کے موت کے گھاٹ اتار دیا تھا جس پر مقتول محمد عادل کے ورثاء نے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر وہاڑی کے آفس کے باہر شدید احتجاج کرتے ہوئے پولیس تھانہ صدر وہاڑی کے خلاف تاحال ملزمان گرفتار نہ کرنے کے خلاف شدید احتجاج اور نعرے بازی کی اور دھرنا بھی دیا واضح رہے کہ اس وقت ریجنل پولیس آفیسر ملتان سیدخرم علی بھی وہاڑی کے دورہ پر پولیس لائنز میں موجود تھے مقتول کے ورثاء اور اہلیان علاقہ نے آر پی او ملتان،ڈی پی او وہاڑی امیر عبداللہ نیازی سے فوری طور پر با اثر اور متعدد چوری، ڈکیتی، قتل اور منشیات فروشی کے مقدمات میں مطلوب ملزمان کی گرفتاری کا مطالبہ کیا ورثاء نے سی آئی اے کے ایک ملازم شاہد چٹھہ پر بھی ان با اثر جرائم پیشہ ملزمان کی سرپرستی کرنے کا الزام بھی لگایا اور نوٹس لینے کا مطالبہ بھی کیا۔

نوجوان قتل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -