کرونا سے 1جاں بحق: گھر گھر ویکسی نیشن مہم، ٹیموں کی مانیٹرنگ کا فیصلہ 

کرونا سے 1جاں بحق: گھر گھر ویکسی نیشن مہم، ٹیموں کی مانیٹرنگ کا فیصلہ 

  

ملتان،رحیم یارخان، کوٹ ادو، ٹبہ سلطان پور، خانیوال (وقائع نگار، بیورو رپورٹ،نامہ نگار، تحصیل رپورٹر، سٹی رپورٹر، نمائندہ پاکستان) نشتر ہسپتال  میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا میں مزید ایک مریض جاں بحق ہوا ہے۔جس کے بعد اموات کی مجموعی  تعداد 871 تک جا پہنچی ہے۔ نشتر ہسپتال کے (بقیہ نمبر46صفحہ6پر)

آئی سو لیشن وارڈز میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا میں مبتلا   مظفر گڑھ کی 50 سالہ نعیم   نے دم توڑ دیا.اس طرح یکم اپریل 2020  سے 27 جولائی 2021 کے درمیان کورونا کے باعث ہونے والی اموات کی مجموعی تعداد 871  ہو گئی ہے۔جبکہ نشتر ہسپتال میں زیر علاج کورونا کہ مریضوں کی تعداد 20 ہو گئی ہے جن میں سے 14 مریضوں کا تعلق ملتان سے ہے,جبکہ کورونا کے شبہ میں 32 مریض زیر علاج ہیں جن کی رپورٹس کا انتظار  ہے،ادھر رواں سال نشتر ہسپتال میں کورونا کے شبہ میں 6ہزار 962 افراد رپورٹ ہوئے جن میں سے 2 ہزار 745 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے۔ حکومت پنجاب کی ہدایت پر ضلع ملتان میں گھر گھر کورونا ویکسی نیشن مہم جاری ہے۔ مہم کے پہلے روز 27 ہزار سے زائد افراد کی کورونا ویکسی نیشن کی گئی۔حکومت نے ملتان سمیت صوبے کے پانچ اضلاع کو 14 اگست تک 18سال سے زائد عمر کے40 فیصد افراد کی ویکسی نیشن کا ہدف دیا ہے۔ضلع ملتان میں 18 سال سے زائد عمر کی 16فیصد آبادی کی کورونا ویکسی نیشن کی جا چکی ہے۔14 اگست تک 6لاکھ86 ہزار افراد کی ویکسی نیشن کا ہدف حاصل کرنے کے لئے ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیں۔ڈپٹی کمشنر علی شہزاد کی ہدایت پر مائیکرو پلان پر عمل شروع کردیا گیا ہے۔علی شہزاد نے تمام اسسٹنٹ کمشنرز کو محکمہ صحت کی ٹیموں کو مانیٹرنگ کا ٹاسک دے دیا ہے۔دوسری طرف ڈپٹی کمشنر نے ایک بار پھر عوام سے کورونا ویکسی نیشن کرانے کی اپیل ہے اور کہا ہے کہ کورونا وباکی چوتھی لہر کا راستہ روکنے کے لئے ویکسی نیشن بہت ضروری ہے،لاک ڈاون سے بچنے کے لئے عوام ویکسی نیشن کرائیں، ڈپٹی کمشنر نے کہا ہے ویکسی نیشن مہم میں دیہی آبادی پیچھے رہ گئی ہے،دیہی آبادی میں رہنے والے افراد رورل ہیلتھ سنٹرز یا موبائل ٹیموں سے کورونا ویکسی نیشن کرائیں۔انہوں نے کہا ہے کہ کورونا ویکسی نیشن نہ کرانیوالوں کو حکومت کی طرف سے عائد پابندیوں کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے،ذمہ دار شہری ہونے کے ناطے عوام ویکسی نیشن کرائیں اور پاکستان اور خود کو کورونا وباسے محفوظ بنائیں۔کورونا وائرس کے کیسزز میں روز بروز اضافہ،گزشتہ24 گھنٹوں میں مزید 14 افراد میں تصدیق تفصیل کے مطابق محکمہ ہیلتھ کی طرف سے دیے گئے اعداد و شمار کے مطابق کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد بڑھنا شروع ہو گئی،گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 14 افراد میں وائرس کی تصدیق ہوگئی، جنہیں ورثہ کی جانب سے شیخ زید ہسپتال لایا گیا جہاں ڈاکٹروں نے متاثرہ مریضوں کے سوائپ حاصل کرنے کے بعد ان میں وائرس کی تصدیق کردی۔ڈپٹی کمشنر ڈاکٹرخرم شہزاد نے کہا ہے کہ ضلع بھر میں کورونا ویکسین لگانے کے حوالہ سے جاری اقدامات میں مزید بہتری لائی جائے گی۔اس سلسلہ میں پہلے مرحلہ میں تحصیل رحیم یار خان کے شہری علاقوں میں موبائل کورونا ویکسی نیشن سروس کا آغاز کیا جا رہا ہے جس کے تحت شہریوں کو گھر بیٹھے ویکسین لگوانے کی سہولت فراہم کی جائے گی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ضلعی انسداد کورونا کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا جس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر(ریونیو) ڈاکٹر سدرہ سلیم، ضلعی فوکل پرسن ڈاکٹر عمران عباس سمیت دیگر افسران موجو دتھے۔ڈپٹی کمشنر نے ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی کو ہدایت کی کہ رحیم یار خان سٹی میں موبائل کورونا ویکسین سروس کے حوالہ سے فوری اقدامات کئے جائیں تاکہ شہری مطلوبہ نمبر پر کال کرکے گھر بیٹھے ویکسین لگوانے کی سہولت سے مستفید ہو سکیں۔انہوں نے کہا کہ موبائل ویکسین سروس کا دائر ہ کار مزید تحصیلوں کی شہری حدود تک مرحلہ وار بڑھایا جائے گا۔ ملک میں کرونا وائرس کی چوتھی لہر شدت اختیار کرچکی ھے اور کرونا کیسسز کی شرح میں اضافے کا رحجان ھے طلبا کے وائرس سے متاثر ہونے کے خدشات اور ان کی صحت کو مد نظر رکھتے ہوئیحفاظتی اقدامات کے  پیش نظر پنجاب میں نہم اور گیارھویں جماعت کے امتحانات کینسل کرکے طلبا کو پرموٹ کرنے کی تجویز زیر غور ہے اور اس کے ساتھ ساتھ تعطیلات میں بھی 15اگست یا 28اگست تک توسیع اور نیا تعلیمی سال یکم ستمبر سے شروع کرنے پر غور کیا جا رہا ہے، مزید ایک ماہ کی چھٹیوں سے طلبا کے تعلیمی نقصان کے پیش نظر والدین میں تشویش پائی جارہی ہے جبکہ بغیر امتحانات کے پرموشن اور مزید چھٹیاں ملنے کی نوید سے طلبا میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ھے اور وہ حتمی فیصلے کے منتظر ہیں،ذرائع کے مطابق طلبا کے صحت کے پیش نظر بغیر امتحانات پرموشن اور تعطیلات میں توسیع کا اصولی فیصلہ کر لیا گیا ہے آج یا چند روز میں باقاعدہ اعلان متوقع ہے انچارج رورل ہیلتھ سنٹر ٹبہ سلطان پور ڈاکٹرشازیہ کی ہٹ دھرمی برقرار محکمہ ہیلتھ کے اعلیٰ افسران کی طرف سے رورل ہیلتھ سنٹر ٹبہ سلطان پور میں  کورونا ویکسینیشن کرنے کے لئے مختص کیا جانے والے کمرے کے ایئر کنڈیشنڈ  کو بندکروادیاہے جس کے باعث شدیدگرمی میں کمرے میں ڈیوٹی دینے والاعملہ اورویکسین لگوانے والے شدیدپریشان ہیں انہوں نے ڈپٹی کمشنر وہاڑی سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔پاکستان ریلوے سے وابستہ ملازمین کو 31جولائی تک ویکسی نیشن مکمل کروانے کا حکم دیدیا گیا ویکسی نیشن نہ کروانے والے ملازمین کو یکم اگست سے تنخواہیں روک دی جائیں گی نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سنٹر کی طرف سے بھجوائے جانیوالے ا عدادوشمار کے دوران یہ بات سامنے آئی ہے کہ اس وقت پاکستان ریلوے سے وابستہ ملازمین کی بڑی تعداد کی طرف سے کرونا کی ویکسی نیشن نہیں کروائی گئی اس لئے پاکستان ریلوے سے وابستہ تمام ملازمین اپنی کرونا ویکسی نیشن 31جولائی تک مکمل کروالیں ویکسی نیشن نہ کروانے والے ملازمین کی تنخواہ یکم اگست سے روک دی جائے گی۔

کرونا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -