بھارت میں جینز پہننے پر 17 سالہ لڑکی کو دادا اور چچا نے قتل کردیا

بھارت میں جینز پہننے پر 17 سالہ لڑکی کو دادا اور چچا نے قتل کردیا
بھارت میں جینز پہننے پر 17 سالہ لڑکی کو دادا اور چچا نے قتل کردیا
سورس: Pixabay.com (creative commons license)

  

نئی دہلی (ویب ڈیسک)  بھارتی ریاست اترپردیش میں 17 سالہ نیہا پاسوان کو جینز پہننے پر اس کے دادا اور چچا نے لاٹھی سے مار مار کر قتل کردیا  اور  ندی میں لاش پھینکنے کی کوشش کے دوران پل پر پھنس گئی ۔ 

بھارتی میڈیا کے مطابق 17 سالہ نیہا پاسوان جینز پہننا پسند کرتی تھی جس پر اس کے دادا اور چچا سخت ناراض ہوتے اور غصے کا اظہار کرتے تھے جب کہ والد محنت مزدوری کے لیے دوسرے شہر گئے ہوئے تھے۔نیہا کی والدہ شکنتلا دیوی پاسوان نے بی بی سی سے گفتگو میں بتایا کہ میری بیٹی روزے سے تھی اور شام کو رسم پوری کرنے کا وقت آیا تو جینز اور شرٹ پہن کر پوجا کرنے لگی جس پر اس کے دادا اور چچا نے انڈیا میں مغربی لباس پر سخت اعتراض کیا۔

شکنتلا دیوی نے واقعات کی تفصیلات بتاتے ہوئے مزید کہا کہ اس پر نیہا نے دادا اور چچا سے خوب بحث کی جس پر ان دونوں نے نیہا کو لاٹھی اور ڈنڈوں سے پیٹا، یہاں تک کہ میری بیٹی جان سے ہاتھ دھو بیٹھی۔نیہا کی لاش کو ٹھکانے لگانے کے لیے رکشے میں لے جا کرند ی پل سے نیچے ندی میں پھینکا گیا لیکن لاش ندی میں گرنے کے بجائے لوہے کی گرل میں پھنس گئی۔

گرل میں پھنسی لاش کو دیکھ کر راہگیروں نے پولیس کو مطلع کیا جس پر دادا کو حراست میں لے لیا گیا تاہم دو چچا اور رکشہ ڈرائیور فرار ہوگئے۔

مزید :

بین الاقوامی -