مہنگائی کی چکی میں پستے عوام پر مہنگائی کا بوجھ بڑھا دیا گیا ، بجلی 9 روپے 89 پیسے فی یونٹ مہنگی

مہنگائی کی چکی میں پستے عوام پر مہنگائی کا بوجھ بڑھا دیا گیا ، بجلی 9 روپے 89 ...
مہنگائی کی چکی میں پستے عوام پر مہنگائی کا بوجھ بڑھا دیا گیا ، بجلی 9 روپے 89 پیسے فی یونٹ مہنگی

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن ) مہنگائی کی چکی میں پستی عوام پر حکومت نے مہنگائی کا بوجھ بڑھا دیا ، نیشنل الیکٹرک اینڈ پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا )نے بجلی 9 روپے 89 پیسے فی یونٹ مہنگی کرنے کی منظوری دیدی۔

نجی ٹی وی "دنیانیوز "کے مطابق سنٹرل پاور پرچیزنگ ایجنسی (سی پی پی اے) کی بجلی کی قیمتوں میں اضافے کی درخواست پر نیپرا میں سماعت ہوئی، سی پی پی اے نے جون کی ماہانہ فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کی مد میں بجلی 9 روپے 89 پیسے فی یونٹ مہنگی کرنے کی درخواست کی، دوران سماعت سی پی پی اے نے کہا کہ گزشتہ ماہ 13 ارب یونٹ بجلی پیدا ہوئی، پیدا شدہ بجلی کی لاگت 213 ارب روپے رہی، فرنس آئل سے پیدا ہونے والی بجلی کی لاگت 36 روپے 20 پیسے، کوئلہ 20روپے 80 پیسے، مقامی گیس 8 روپے 92 پیسے، ایل این جی سے پیدا ہونے والی بجلی کی لاگت 28 روپے 38 پیسے فی یونٹ رہی۔

سی پی پی اے کی درخواست میں کہا گیا کہ ایران سے 19 روپے 57 پیسے فی یونٹ میں بجلی درآمد کی گئی اور 42 پیسے فی یونٹ بجلی لائن لاسز کی نذر ہو گئی ،نیپرا نے سماعت کے بعد بجلی کی قیمتوں میں 9 روپے 89 پیسے فی یونٹ اضافے کی منظوری دے دی، قیمتوں میں اضافے کا اطلاق نوٹی فکیشن جاری ہونے کے بعد ہو گا، اس کے نتیجے میں بجلی صارفین پر ایک ماہ میں 100 ارب روپے سے زائد کا بوجھ پڑے گا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -