پشاور میں امن لشکر کے سربراہ کو تین ساتھیوں سمیت قتل کردیا گیا

پشاور میں امن لشکر کے سربراہ کو تین ساتھیوں سمیت قتل کردیا گیا

  

پشاور( این این آئی) پشاور میںامن لشکر کے سربراہ کو تین ساتھیوں سمیت قتل کر دیا گیاچاروں افرادکی لاشیں ایک گاڑی سے برآمد ہوئی ہیں۔ تفصیلات کے مطابق سابق یونین کونسل ناظم اور بازید خیل امن لشکر کے سربراہ فہیم دو روز قبل لاپتہ ہو گئے تھے گزشتہ روز پولیس کو پہاڑی پورہ رنگ روڈ کے درمیان واقع چوک میں ایک سفید رنگ کی لینڈ کروزر سے چار افراد کی لاشیں ملیں جن میں فہیم بھی شامل تھے-پولیس کے مطابق فہیم اور دو دیگر افراد کی لاشیں لینڈ کروزر کی دوسری سیٹ پر جبکہ چوتھے شخص کی لاش آخری سیٹ پر پڑی تھی-ابتدائی رپورٹ کے مطابق چاروں افراد کو کسی اور مقام پر قتل کرنے کے بعد لاشیںمذکورہ چوک میں چھوڑ دی گئیں- پولیس کے مطابق چاروں افراد کو گولیاں مار کر قتل کیا گیا ہے۔ محمد فہیم پشاور کے نواحی علاقے بڈابیر کے ناظم رہ چکے ہیں اوربڈابیر میں طالبان مخالف امن لشکر کے سربراہ بھی تھے۔اس واقعے کی ذمہ داری کالعدم تنظیم تحریکِ طالبان پاکستان نے قبول کرلی ہے۔کالعدم تنظیم تحریکِ طالبان پاکستان کے مرکزی ترجمان احسان اللہ احسان نے برطانوی نشریاتی ادارے کو فون کر کے واقعے کی ذمہ داری قبول کی۔ انہوں نے کہا کہ طالبان امن لشکروں کے خلاف کارروائی کرتے رہیں گے۔

مزید :

صفحہ اول -