تاجپورہ اتوار بازار کی چار دیواری کرپشن کی نذر پر انے مٹریل سے کھاتہ پورا

تاجپورہ اتوار بازار کی چار دیواری کرپشن کی نذر پر انے مٹریل سے کھاتہ پورا

  

لاہور(اسد اقبال، تصاویر ذیشان منیر) عزیز بھٹی ٹاﺅن کے زیراہتمام تاجپورہ اتوار بازار کو محفوظ بنانے کی خاطر تعمیر کی جانے والے چار دیواری کرپشن اور روایتی لوٹ مار کی نظر ہوگئی۔ دو فٹ اونچی دیوار و جنگلہ بنا کر کارروائی ڈال دی گئی اور اس پر طرہ یہ کہ اس دو فٹی دیوار میں بھی پرانا میٹریل استعمال کرکے سرکاری کھاتہ پورا کردیاگیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق عزیز بھٹی ٹاﺅن میں واقع تاجپورہ اتوار بازار اراضی جو تقریباً8 کنال پر محیط ہے ایل ڈی اے کی ملکیت ہے جہاں پر عرصہ دراز سے اتوار بازار لگا کر عوام کو سستی اشیاءکی فراہمی دی جارہی ہے جس کومحفوظ بنانے کے لئے عزیز بھٹی ٹاﺅن نے اتوار بازار کے چاروں اطراف چار دیواری کا کام شروع کردیا ہے تاجپورہ اتوار بازار کے چیئرمین لالہ نذیر، وائس چیئرمین ماما امین، کوارڈنیٹر سلیم زرگر اور طارق ناگی نے پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ٹھیکیدار سے ملی بھگت کے باعث پرانا میٹریل استعمال کرکے دیوار کی اونچائی کو کم کرکے لاکھوں روپے کی کرپشن کی جارہی ہے انہوں نے کہا کہ 8 کنال اراضی کی چار دیواری کے لئے 38 لاکھ روپے کا ٹینڈر کیاگیا ہے۔ ڈی سی او لاہورنے واضح منظوری کا اعلان کرتے ہوئے عزیز بھٹی ٹاﺅن کو احکامات دیئے کہ تاجپورہ اتوار بازار کی چار دیواری کو 5 فٹ تک اونچا بنا کر محفوظ بنایا جائے۔ تاہم ٹاﺅن اور ٹھیکیدار کی ملی بھگت کے باعث 5 فٹ چار دیواری کو 2 فٹ میں تبدیل کردیاگیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ غفور نامی ٹھیکیدار کرپشن میں مصروف ہے جو ماضی میں بھی کئی ایک پراجیکٹ ٹاﺅن افسران سے تانا بانا کرکے لاکھوں کروڑوں روپے ہضم کرچکا ہے انہوں نے کہا کہ عزیز بھٹی ٹاﺅن کے ایکسین اعظم راٹھور سے چار دیواری ٹینڈر کا واک آﺅٹ کاغذات کی نقول مانگنے کے باوجود دی نہیں جارہی جس کی وجہ کرپشن کو چھپانا ہے۔ انہوں نے ڈی سی او لاہور نورالامین سے اپیل کی ہے کہ تاجپورہ اتوار بازار کی چار دیواری میں سرکاری رقم کی خردبرد اور ٹینڈر کے مطابق کام نہ ہونے پر تحقیقاتی ٹیم تشکیل دیں اور قرار واقع افراد کے خلاف سخت قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -