شہباز شریف کا کراچی کوپیرس بنانے کا دعویٰ ،پرانی بوتل میں نئی شراب

شہباز شریف کا کراچی کوپیرس بنانے کا دعویٰ ،پرانی بوتل میں نئی شراب

تجزیاتی رپورٹ/نعیم الدین

مسلم لیگ (ن) کے سربراہ اور سابق وزیراعلی پنجاب کراچی کے حلقہ NA-249 کے امیدوار شہباز شریف کا دورہ کراچی اور اپنی الیکشن مہم کا یہیں سے آغاز کیا ، اس دورے کو انتہائی کامیاب قرار دیا جارہا ہے۔ ان کا دعویٰ ہے کہ وہ کراچی کو پیرس بنانا چاہتے ہیں اور اس مقصد کیلئے وہ مستقبل قریب کراچی میں اپنا ذاتی مکان بھی بنانا چاہتے ہیں ۔ یہ حقیقت ہے کہ وہ لاہور کو لندن شہر کی طرح کا بنا چکے ہیں، کیونکہ جو بھی اس شہر کو دیکھتا ہے وہ یہی دعویٰ کرتا ہوا نظر آتا ہے کہ لاہور واقعی لاہور ہے اور وہ لندن سے کم نہیں ۔ کراچی کو پیرس بنانے کی باتیں تو تب کی ہیں اگر انہیں ملک کا اقتدار ملتا ہے۔ اور دوسرے یہ کہ سندھ حکومت جو کہ گذشتہ دس سال سے پیپلز پارٹی کا قبضہ رہا ہے اور اس کو ہمیشہ وفاق سے شکوہ رہا ہے کہ وہ تعاون نہیں کرتا جبکہ وفاقی حکومت کو بھی صوبائی حکومت سے ہمیشہ کی طرح تعاون کرتی ہوئی نظر نہیں آتی، خود پیپلز پارٹی کے تخلیقی سربراہ ذوالفقار علی بھٹو نے لیاری کیلئے یہ جملہ استعمال کیا تھا کہ ’’وہ لیاری کو پیرس بنادیں گے ‘‘ جس کے بعد لیاری کی عوام 50 سال سے یہ مطالبہ کرتے چلے آئے ہیں کہ لیاری کب پیرس بنے گا ؟ کیونکہ لیاری پر ماضی کی حکومتوں نے کبھی بھی توجہ نہیں دی وہ علاقہ آج بھی صوبائی حکومتوں کی ستم ظریفی کا شکار ہے۔ شبہاز شریف نے اپنے حلقہ میں بلدیہ گراؤنڈ میں ایک بڑا جلسہ بھی کیا جو کہ کامیاب قرار دیا گیا ، جبکہ دوسری جانب کرپشن، مہنگائی ، بیروزگاری اور بدانتظامی کے باعث حالات سے تنگ آتے ہوئے عوام اس مرتبہ کوئی بڑی تبدیلی کا خواب دیکھ رہے ہیں اور یہ تبدیلی وہ ووٹ کے ذریعے لائیں گے۔ ان تمام صورتحال کے باعث حکمرانوں کو ایوان اقتدار میں پہنچانے والے عوام اب ماضی کے حکمرانوں کے بجائے عدلیہ کی جانب نظریں جمائے ہوئے ہیں۔ اب تو صورتحال یہ ہے کہ بڑی بڑی سیاسی جماعتوں کے جیتے ہوئے وہ امیدوار جو اقتدار کے مزے بھی لیتے رہے ہیں، لیکن وہ عوام کے پاس پانچ سال بعد جارہے ہیں ۔ نوجوان نسل کے ووٹرز جو کہ سیاسی شخصیات سے اچھی طرح باخبر ہیں اور اپنی نظریں ان کے اثاثوں پر بھی جمائے ہوئے ہیں جو اعداد کی ہیرا پھیری سے عوام کے ساتھ ساتھ الیکشن کمیشن کو بھی گھمانے کی کوشش کررہے ہیں۔ شبہاز شریف کو فاتح لاہور کہا جاتا ہے انہوں نے کراچی کے عوام سے وعدہ کیا ہے کہ چھ ماہ میں وہ عوام کو کراچی شہر صاف ستھرا کرکے دکھائیں گے اور پینے کا صاف پانی دیں گے۔ لیکن یہ ساری باتیں اس وقت پوری ہونگی جب شہباز شریف کو وزیراعظم کا عہدہ ملے اور سندھ میں ان کا سیاسی جماعتوں سے اتحاد ہو اور وزارت اعلیٰ ان کی جماعت کو چاہے مشترکہ طور پر مل جائے، تب ہی ان کا یہ خواب شرمندۂ تعبیر ہوسکے

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر